اسلامی نظام نافذ کیا جائے، تحریک چلائی جائے گی: نظام مصطفیٰ کانفرنس


 

cnfrncجماعت اسلامی کے زیر اہتمام منصورہ میں بیس سے زائد دینی جماعتوں کے علماء نے اعلان کیا ہے کہ پاکستان کو لبرل سیکولر بنانے کی سازشوں کا ڈٹ کر مقابلہ کیا جائے گا

نظام مصطفے کانفرنس میں علماءے کرام نے اعلان کیا ہے کہ لبرل سیکولر پاکستان نہیں، اسلامی پاکستان چاہتے ہیں ، پنجاب حکومت کا تحفظ خواتین ایکٹ خاندانی نظام کا شیرازہ بکھیرنے کا قانون ہے، آج متبادل بل پیش کریں گے۔

جماعت اسلامی کے زیر اہتمام منصورہ میں بیس سے زائد دینی جماعتوں کی نظام مصطفے کانفرنس کے پہلے سیشن میں علمائے کرام نے اعلان کیا کہ پاکستان کو لبرل سیکولر بنانے کی سازشوں کا ڈٹ کر مقابلہ کیا جائے گا، پاکستان اسلام کے نام پر بنا اور یہاں اسلامی نظام ہی نافذ کیا جائے گا ۔

امیر جماعت اسلامی سراج الحق وزیر اعظم کے لبرل پاکستان کے بیان اور بلاول بھٹو کی جانب سے سیکولر جماعتوں کو اتحاد کی دعوت پر برس پڑے۔

کانفرنس سے خطاب میں ابتسام الہی ظہیر ،عبد اللہ گل ،پیر محفوظ مشہدی ،ڈاکٹر وسیم اختر حافظ حسین احمد اوردیگر علمائے کرام کا کہنا تھا کہ لادین قوتیں قرار داد مقاصد کو متنازع بنانے کی سازش کر رہی ہیں ۔

علماء کا کہنا تھا کہ لادینی نظام کا راستہ روکنے کے لیے دینی قیادت بھی ایک پیج پر آ گئی ہیں۔

علمائے کرام کا کہنا تھا کہ تحفظ خواتین ایکٹ مغرب کے اشارے پر لایا گیا جو کسی صورت بھی قبول نہیں تمام دینی جماعتیں آج متبادل بل پیش کریں گی ۔


Comments

FB Login Required - comments