گجرات، چکوال اور بہاولپور کی نشستوں پر پی ٹی آئی اور (ق) لیگ میں پھوٹ پڑ گئی


پاکستان تحریک انصاف اور مسلم لیگ (ق) کے درمیان گجرات، چکوال اور بہاولپور کی نشستوں پر انتخابی ایڈجسٹمنٹ خطرے میں پڑ گئی۔ تحریک انصاف کے ناراض مقامی رہنماؤں و کارکنوں نے (ق) لیگ کے امیدواروں کی حمایت کرنے کی بجائے اپنی ہی پارٹی کے جیپ کا نشان رکھنے والے آزاد امیدواروں کی حمایت کر دی۔ اس پر (ق) لیگ کے رہنما چوہدری پرویز الٰہی نے عمران خان اور پارٹی کے دیگر رہنماؤں سے رابطہ کیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق مسلم لیگ (ق) اور تحریک انصاف کے درمیان گجرات میں قومی اسمبلی کی 2، چکوال سے قومی اسمبلی کی ایک اور بہاولپور سے قومی اسمبلی کی ایک نشست پر انتخابی ایڈجسٹمنٹ ہوئی تھی اور تحریک انصاف نے اپنے امیدواروں کو ٹکٹ جاری نہیں کئے تھے۔ عمران خان نے مقامی قیادت کو ہدایت جاری کی تھی کہ (ق) لیگ کے امیدواروں کو کامیاب بنائیں تاہم تحریک انصاف کے مقامی رہنماؤں اور کارکنان نے مرکزی قیادت کا فیصلہ مسترد کر دیا اور جیپ کا نشان حاصل کرنے والے آزاد امیدواروں کی حمایت کا اعلان کر دیا ہے جس کے بعد ان حلقوں میں (ق) لیگ کیلئے سیاسی مشکلات پیدا ہو گئی ہیں اور ان کی کامیابی مشکوک نظر آرہی ہے۔ اس صورتحال پر مرکزی قیادت نے کارکنوں سے رابطے کرلئے ہیں اور انہیں قائل کرنے کی کوشش کی جا رہی ہے کہ عمران خان کے فیصلے کے تحت (ق) لیگ کے امیدواروں کو سپورٹ کیا جائے۔

image_pdfimage_print
Comments - User is solely responsible for his/her words


اگر آپ یہ سمجھتے ہیں کہ ”ہم سب“ ایک مثبت سوچ کو فروغ دے کر ایک بہتر پاکستان کی تشکیل میں مدد دے رہا ہے تو ہمارا ساتھ دیں۔ سپورٹ کے لئے اس لنک پر کلک کریں