اسلام آباد میں موٹر وے، جی ٹی روڈ، موبائل سروس اور انٹرنیٹ بند: ن لیگ کے سینکڑوں کارکن گرفتار


سابق وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف اور ان کی صاحبزادی مریم نواز کے طیارے کی اسلام آباد لینڈنگ کی صورت میں سکیورٹی کے غیر معمولی انتظامات کئے گئے ۔ذرائع کے مطابق نیو اسلام آباد ایئرپورٹ پر غیر معمولی سیکورٹی انتظامات کیے گئے ہیں، ایئرلائینز کے آفس سمیت تمام دفاتر کو بند کروا دیا گیا، سیکورٹی اداروں اور اے ایس ایف نے ایئرپورٹ کی سیکورٹی کا ازسرنو جائزہ لیا۔ اسلام آباد انٹرنیشنل ایئرپورٹ پر اے ایس ایف اہلکاروں کی تعداد میں بھی اضافہ کیا گیا۔

لاہور شہر میں موبائل سروس بند کرنے کیلئے حکومت پنجاب نے وفاقی حکومت سے رابطہ کر لیا ہے۔ جبکہ انٹرنیٹ سروس بھی معطل کرنے اور نواز شریف کے استقبال کیلئے پورے ملک سے آنیوالے ن لیگ کے کارکنوں کو روکنے کیلئے موٹر وے اور جی ٹی روڈ بھی بند کئے جانے کی۔

غیر مصدقہ اطلاعات کے مطابق سینکڑوں کارکنوں کو لاہور شہر سے رات گئے گرفتار کر لیا گیا ہے اور ائیرپورٹ جانے والے راستوں پر بھی رکاوٹیں کھڑی کر دی گئی ہیں۔دوسری جانب نگران وزیر اطلاعات علی ظفر نے سابق وزیر اعظم نوازشریف اور مریم نواز کو ابوظہبی میں ہی گرفتار کرنے کی خبروں کی تردید کرتے ہوئے کہا کہ پاکستانی حکام کو بیرون ملک گرفتاریوں کا کوئی اختیار نہیں ہے۔ اسلام آباد میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے نگران وزیر اطلاعات علی ظفر نے واضح کیا کہ سابق وزیر اعظم نوازشریف اور مریم نواز کو ابوظہبی میں گرفتار نہیں کیا گیا، اس حوالے سے خبریں بے بنیاد اور حقائق کے منافی ہیں۔

image_pdfimage_print
Comments - User is solely responsible for his/her words


اگر آپ یہ سمجھتے ہیں کہ ”ہم سب“ ایک مثبت سوچ کو فروغ دے کر ایک بہتر پاکستان کی تشکیل میں مدد دے رہا ہے تو ہمارا ساتھ دیں۔ سپورٹ کے لئے اس لنک پر کلک کریں