وینز ویلا کے صدر مدورو ڈرون حملے میں ’بچ گئے‘


Venezuelan President Nicolás Maduro (2nd left) during an outdoor event in Caracas. Photo: 4 August 2018

EPA
صدر مورانڈو ایک فوجی تقریب میں موجود تھے

وینز ویلا کے حکام کا کہنا ہے کہ ملک کے دارالحکومت کراکس میں صدر نکولس مدورو کے خطاب کے دوران ڈرون حملہ ہوا ہے تاہم صدر اس حملے میں محفوظ رہیں ہیں۔

تقریب کے دوران دو ڈرون آئے جس میں دھماکہ خیز مواد نصب تھا۔

وزیرِ اطلاعات جارج روڈریگز کا کہنا تھا کہ یہ حملہ صدر کی جان لینے کی کوشش تھی جس میں سات فوجی زخمی ہوئے۔

صدر مدورو ایک کھلے مقام پر ایک فوجی تقریب سے خطاب کر رہے تھے کہ اچانک انھوں نے اور ان کے ساتھ موجود اہلکاروں نے فضا میں دیکھنا شروع کر دیا جس کے بعد آواز بند کر دی گئی۔

نشریات معطل ہونے سے قبل بہت سے فوجیوں کو بھاگتے ہوئے دیکھا گیا۔

اسی بارے میں

وینزویلا: سپریم کورٹ پر ہیلی کاپٹر سے حملہ

لاطینی امریکہ کی زندگی پر ایک نظر

اس فوٹیج میں ایک زور دار دھماکے کی آواز بھی سنی جا سکتی ہے۔

حکام کے مطابق ہوا کیا تھا؟

وزیرِ اطلاعات جارج روڈریگز کا کہنا ہے کہ حملہ اس وقت ہوا جب صدر وینزویلا کی فوج کے 81 ویں سالگرہ کے موقعے پر خطاب کر رہے تھے۔

Security forces check a building after explosions near the place where President Maduro was speaking. Photo: 4 August 2018

AFP/Getty Images
دھماکے سے متاثر ہونے والے عمارت

اسی دوران بارود سے بھرے دو ڈرونز صدر کے قریب پہنچ گئے۔

انھوں نے ملک کے دائیں بازو کے گروہ پر حملے کا الزام عائد کیا۔ وزیر اطلاعات نے کہا کہ مخالفین انتخابات میں ہارنے کے بعد ایک بار پھر ناکام ہو گئے ہیں۔

یاد رہے کہ رواں سال مئی میں ہونے والے انتخابات میں صدر نکولس مدورو ایک بار پھر چھ سال کے لیے ملک کے صدر منتخب ہوئے تھے۔

وزیرِ اطلاعات جارج روڈریگز کے مطابق زخمی فوجیوں کا علاج کیا جا رہا ہے۔ تاحال کسی گروہ نے اس حملے کی ذمہ داری قبول نہیں کی ہے۔

اس سے قبل جون سنہ 2017 میں ایک ہیلی کاپٹر حملے میں وینزویلا کی سپریم کورٹ پر گرنیڈ گرائے گئے تھے۔

آسکر پرییز نامی شخص نے اس حملے کی ذمہ داری قبول کرتے ہوئے کہا تھا کہ وینزویلا کے عوام صدر مدورو کی حکومت کے خلاف اٹھ کھڑے ہوں۔ وہ جنوری میں کراکس کے قریب پولیس کی کارروائی میں مارا گیا تھا۔

image_pdfimage_print
Comments - User is solely responsible for his/her words


اگر آپ یہ سمجھتے ہیں کہ ”ہم سب“ ایک مثبت سوچ کو فروغ دے کر ایک بہتر پاکستان کی تشکیل میں مدد دے رہا ہے تو ہمارا ساتھ دیں۔ سپورٹ کے لئے اس لنک پر کلک کریں

بی بی سی

بی بی سی اور 'ہم سب' کے درمیان باہمی اشتراک کے معاہدے کے تحت بی بی سی کے مضامین 'ہم سب' پر شائع کیے جاتے ہیں۔

british-broadcasting-corp has 4854 posts and counting.See all posts by british-broadcasting-corp