شیخوپورہ میں 10 سالہ بچے پر امام مسجد کا وحشیانہ تشدد: چیف جسٹس نے ڈی پی او کو طلب کر لیا


چیف جسٹس آف پاکستان نے نوٹس لیتے ہوئے 10 سالہ بچے پر امام مسجد کے تشدد کا نوٹس لیتے ہوئے ڈی پی اوشیخوپورہ کو 7 اگست کو ذاتی طور پر طلب کر لیا ہے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق شیخوپورہ میں امام مسجد نے 10 سالہ بچے کو تشدد کا نشانہ بنایا۔ اس واقعے کا چیف جسٹس نے از خود نوٹس لے لیا۔ جس کے بعد چیف جسٹس نے ڈی پی اوشیخوپورہ کو ریکارڈ سمیت 7 اگست کوطلب کر لیا۔ امام مسجد نے مسجد سے چند روپے چوری کرنے پر زوہیب کو ناقابل بیان تشدد کا نشانہ بنایا۔ ذرائع کے مطابق بچے کا والد مزدور ہے ایف آئی آر درج کروانے گیا تو محرر نے تھانے سے نکال دیا ۔

image_pdfimage_print
Comments - User is solely responsible for his/her words


اگر آپ یہ سمجھتے ہیں کہ ”ہم سب“ ایک مثبت سوچ کو فروغ دے کر ایک بہتر پاکستان کی تشکیل میں مدد دے رہا ہے تو ہمارا ساتھ دیں۔ سپورٹ کے لئے اس لنک پر کلک کریں