آسٹریلیا میں پاکستانی طالب علم پر نسل پرستوں کا بہیمانہ تشدد


آسٹریلیا میں پاکستانی طالب علم پر نسل پرستوں کا بہیمانہ تشدد

آسٹریلیا کی نیوکاسل یونیورسٹی کے پاکستانی طالب علم پرنسل پرستوں نے بہیمانہ تشدد کیا ہے۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق 21 برس کے عبداللہ قیصر کو نیوکاسل یونیورسٹی کی لائبریری جاتے ہوئے نسل پرستوں نے تشدد کا نشانہ بنایا۔

آسٹریلیا میں پاکستانی طالب علم پر نسل پرستوں کا بہیمانہ تشدد

تشدد کے بعد نسل پرستوں نے عبداللہ قیصر کو کہا کہ جاؤ پاکستان جاؤ، تمہارا یہاں سے کوئی تعلق نہیں اور عبداللہ قیصر کی گاڑی کو بھی گھیر لیا جبکہ ایک خاتون نے موبائل فون بھی چھین لیا۔

عبداللہ قیصر نیم بےہوشی کے عالم میں کار ڈرائیو کر کے یونی ورسٹی کے فرسٹ ایڈ روم پہنچا۔

خیال رہے کہ عبداللہ قیصر انجینئرنگ کی تعلیم حاصل کرنے کے لیے پچھلے سال فروری میں نیوکاسل آئے تھے۔

image_pdfimage_print
Comments - User is solely responsible for his/her words


اگر آپ یہ سمجھتے ہیں کہ ”ہم سب“ ایک مثبت سوچ کو فروغ دے کر ایک بہتر پاکستان کی تشکیل میں مدد دے رہا ہے تو ہمارا ساتھ دیں۔ سپورٹ کے لئے اس لنک پر کلک کریں