جو مسائل جلسوں میں حل نہیں ہوتے وہ پارلیمنٹ حل کر سکتی ہے : خورشید شاہ


khorsheed shahپاناما لیکس کا معاملہ ختم نہیں ابھی شروع ہوا ہے ،سوالوں کا جواب نہ ملنے پر واک آوٹ کیا ، پارلیمنٹ ہی مسائل حل کرے گی، خورشید شاہ کا قومی اسمبلی میں اظہار خیال۔
وزیر اعظم نواز شریف کی اسمبلی میں دو ماہ بعد آمد پر خورشید شاہ کہنا تھا کہ کفر ٹوٹا خدا خدا کر کے،وزیراعظم ایوان میں آئے۔ انہوں نے کہا کہ وزیرا عظم کے اظہار خیال پر بڑے تحفظات ہیں اور اپوزیشن نے سوالات کے جوابات نہ ملنے پر واک آو¿ٹ کیاتھا۔ خورشیدشاہ نے بیان دیا کہ اپوزیشن ممبران نے بڑے صبرکے ساتھ وزیراعظم کی وضاحتیں سنیں۔ جومسئلے جلسوں میں حل نہیں ہوسکتے،وہ پارلیمنٹ حل کرسکتی ہے۔ ہم اپنے فیصلے باہرکرتے تھے اس لیے پارلیمنٹ کو اہمیت نہیں ملی۔ اپوزیشن نے پاناما کا معاملہ نہیں اٹھایا، یہ معاملہ عالمی سطح پر اٹھایا گیا۔ اپوزیشن لیڈر کا مزید کہنا تھا کہ ہم انتظارکرتے رہے کہ حقیقت سامنے آجائے۔ نوازشریف کے بیٹوں نے کبھی پاناما لیکس کا اعتراف کیا کبھی تردید کی۔ دوسری جانب پانامہ لیکس کے معاملے پر بالآخر عمران خان کا انتظار ختم ہونے جا رہا ہے۔ آج قومی اسمبلی میں کپتان دھواں دار خطاب کریں گے۔ تیز باﺅنسر زکی تیاری مکمل کر لی۔ کچھ تو اپنی صفائی دیں گے اور کچھ حکمرانوں کے معاملات سے بھی پردہ اٹھائیں گے۔ تحریک انصاف کے چیئرمین اپنی مکمل ٹیکس ریٹرن اور اثاثہ جات کی تفصیلات بھی ایوان کے سامنے رکھیں گے اور قومی اسمبلی کو اپنی آف شور کمپنی اور فلیٹ کی فروخت بارے بھی آگاہ کریں گے۔ یہی نہیں کپتان شریف فیملی کی آف شور کمپنیوں کے کاغذات بھی ایوان کو دکھائیں گے۔ جبکہ ایسی آف شور کمپنیوں کی تفصیلات بھی سامنے لائیں گے جن سے شریف فیملی کے ممبران کا بلاواسطہ تعلق ہے۔ شریف فیملی کے کس ممبر کی زیر ملکیت کمپنی کی کیا حقیقت ہے، عمران خان اس پر بھی ایوان کو اعتماد میں لیں گے۔ کپتان نیسکول لمیٹڈ اور نیلسن انٹرپرائزنامی آف شور کمپنیوں کی رجسٹریشن کے کاغذات بھی اسمبلی میں لائیں گے۔


Comments

FB Login Required - comments