حامد میر نے جنگ گروپ کیوں چھوڑا؟ اعزاز سید کی ٹویٹ پر ردعمل


سینئر صحافی اور معروف تجزیہ کار حامد میر نے جیو کو چھوڑنے کے بعد اس کے سلامت رہنے کی دعا کردی۔ مائیکرو بلاگنگ ویب سائٹ ٹوئٹر پر صحافی اعزاز سید نے کہا کہ ابھی ابھی پارلیمینٹ ہاوس میں آصف زرداری صاحب سے آمنا سامنا ہو گیا میں نے پوچھا آپ کے دوست معروف صحافی حامد میر صاحب نے جیو چھوڑنے سے قبل آپ سے کوئی مشورہ نہیں کیا؟ سابق صدر بولے انہوں نے مجھ سے مشورہ نہیں کیا اگر کرتے تو انہیں جیو چھوڑنے کا مشورہ ہرگز نہ دیتا۔

اس پر حامد میر سے بھی رہا نہ گیا اور انہوں نے اعزاز سید کو جواب دیتے ہوئے کہا کہ تو آپ کے خیال میں کسی صحافی کو اپنی صحافت کا فیصلہ زرداری صاحب سے پوچھ کر کرنا چاہیئے؟ آپ کو اچھی طرح پتہ ہے میں نے 10 اگست کو جیو کیوں چھوڑا لیکن آپ درمیان میں زرداری صاحب کو لے آئے۔ میں آپ کو جواب دے کر جیو کو نقصان نہیں پہنچانا چاہتا۔ اللہ پاک آپ کو اور جیو کو سلامت رکھے۔

حامد بھائی خدا آپ کو سلامت رکھے اور پہلے سے زیادہ کامیابیاں دے۔ مجھے آپ کے جانے کا دلی دکھ ہے اور فیصلے کے پس منظر کے بارے کچھ اندازہ بھی۔ زرداری صاحب خود کو آپ کا دوست کہتے ہیں اس لئے ان سے پوچھ لیا۔

image_pdfimage_print
Comments - User is solely responsible for his/her words


اگر آپ یہ سمجھتے ہیں کہ ”ہم سب“ ایک مثبت سوچ کو فروغ دے کر ایک بہتر پاکستان کی تشکیل میں مدد دے رہا ہے تو ہمارا ساتھ دیں۔ سپورٹ کے لئے اس لنک پر کلک کریں