پاکستانی وزیرخارجہ نے نیم عریاں لڑکی سے ناک کیسے رگڑی


سیٹو کی کونسل کا ایک اور اجلاس نیوزی لینڈ میں ہوا، اوک لینڈ میں وزیراعظم نے ڈنر دیا سارے سفارتی نمائندے آئے تھے، کھانے کے بعد تقریر کرتے ہوئے انہوں نے سیٹو کے سات ممالک کے وزرائے خارجہ کو باری باری متعارف کرانا شروع کیا۔ انہیں ہر وزیر خارجہ کو متعارف کرانے کے لئے مناسب لفظ مل گئے مگر جب پاکستان کی باری آئی تو لمحے بھر کے لئے ٹھٹک گئے کہ کن الفاظ سے تعارف کرایا جائے۔ چنانچہ کہنے لگے۔ ” جناب وزیر خارجہ پاکستان جناب منظور قادر کھڑے ہو جائیں۔ “ اور معصوم سے شرمیلے سے منظور قادر کھڑ ے ہو گئے۔

پھر وقفہ آیا۔ اس کے بعد والٹر نیش نے کہا۔ ” مسٹر منظور قادر اس عظیم ملک پاکستان کے وزیر خارجہ ہیں جس نے صدیوں یپشتر ہندوستان کو فتح کیا اور اسے تہذیب سکھائی۔ “ انہوں نے پاکستا ن کے وزیر خارجہ کے بارے میں بس یہی الفاظ کہے مگر ان الفاظ میں وہ بہت کچھ کہہ گئے۔ ” قریب ہی بھارتی ہائی کمشنر بیٹھے تھے، وہ اٹھے اور احتجاجاً واک آؤٹ کر گئے۔ والٹر نیش کو احساس ہوا کہ ان کی بات پر ناراض ہو کر بھارتی ہائی کمشنر جا رہے ہیں، تب انہوں نے کہا کہ میرا مطلب کسی معزز رہنما کے احساسات کو مجروح کرنا نہیں تھا، میرے دل میں ان کے ملک کے لئے بڑی محبت ہے، وہ کامن ویلھ میں ہمارے ساتھی ہیں۔ میں تو صرف تاریخ کا حوالہ دے رہا تھا۔ “

ڈنر ختم ہوا مہمانوں کے لئے سٹیج شو کا اہتمام تھا، اس میں ماعوری رقص بھی شامل تھا۔ رقص ختم ہوا تو وزیر اعظم نے کہا کہ ماعوری کی ایک پرانی رسم ہے کہ تقریب کے اختتام پر ایک معزز مہمان سٹیج پر موجود سب سے خوبصورت لڑکی کی ناک سے ناک رگڑتا ہے۔ والٹر نیش نے ادھر ادھر دیکھا، پھر جو واقعہ تھوڑی دیر پہلے پیش آیا تھا اس کے پیش نظر منظور قادر سے کہا آپ یہ مبارک رسم ادا کریں۔

منظور قادر طبعاً شرمیلے تھے مگر وہ اپنی کرسی سے اٹھے اور جوش میں سیدھے سٹیج کی طرف گئے۔ سٹیج پر سب سے خوبصورت لڑکی ڈھونڈی اس کی طرف بڑھے مگر جب لڑکی کے عین سامنے کھڑے ہوئے تو کیمرہ مینوں کی اک فوج ظفر آئی۔ غالباً اس وقت منظور قادر کی نظر میں پاکستان اخبارات میں اپنی اس حالت میں چھپی ممکنہ تصویر گھوم رہی تھی کہ وزیر خارجہ انتہائی کم لباس مگر خوبصورت لڑکی کی ناک سے ناک رگڑا رہے ہیں۔ چنانچہ جہاں وہ کھڑے تھے۔ وہیں جم گئے، پھر میزبان کی طرف رخ کر کے کہنے لگے۔ ” جناب وزیراعظم، میں اس اعزاز پر آپ کا شکر گزار ہوں مگر میری طرف سے ایئر مارشل ناک رگڑیں گے۔ “

image_pdfimage_print
Comments - User is solely responsible for his/her words


اگر آپ یہ سمجھتے ہیں کہ ”ہم سب“ ایک مثبت سوچ کو فروغ دے کر ایک بہتر پاکستان کی تشکیل میں مدد دے رہا ہے تو ہمارا ساتھ دیں۔ سپورٹ کے لئے اس لنک پر کلک کریں