اقوام متحدہ میں امریکا کی بھارتی نژاد مستقل مندوب نکی ہیلی مستعفی


واشنگٹن — اقوام متحدہ میں امریکا کی مستقل مندوب نکی ہیلی مستعفی ہوگئی ہیں۔ صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے ان کا استعفا منظور کرلیا ہے۔

نکی ہیلی ٹرمپ انتظامیہ کے اہم ترین افراد میں شامل تھیں۔ یہ معلوم نہیں ہو سکا کہ انھوں نے مستعفی ہونے کا فیصلہ کیوں کیا۔ نیوز ویب سائٹ، ’ایگزیوس‘ کے مطابق نکی ہیلی نے گزشتہ ہفتے وائٹ ہاؤس میں صدر ٹرمپ سے ملاقات میں مستعفی ہونے پر تبادلہٴ خیال کیا تھا۔

نکی ہیلی نے 27 جنوری 2017 کو اقوام متحدہ میں امریکا کی مستقل مندوب کا عہدہ سنبھالا تھا۔

وہ اقوام متحدہ کی سخت ناقد رہیں اور اسے امریکا اور اسرائیل سے متعلق متعصب قرار دیتی رہیں۔ انھوں نے اقوام متحدہ کی فنڈنگ میں امریکی تعاون میں نمایاں کمی کی اور اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کونسل پر تنقید کرکے امریکا کو اس سے باہر نکال لیا تھا۔

بھارتی نژاد سکھ خاندان سے تعلق رکھنے والے نمراتا نکی ہیلی اس سے قبل جنوبی کیرولائنا کی گورنر تھیں۔ 2012 میں ری پبلکن صدارتی امیدوار مٹ رومنی نے انھیں اپنے ساتھ نائب صدر کی امیدوار بنانے کے بارے میں سوچا تھا، لیکن نکی ہیلی نے باقاعدہ پیشکش سے پہلے ہی معذرت کرلی تھی۔
بشکریہ وائس آف امریکہ

image_pdfimage_print
Comments - User is solely responsible for his/her words


اگر آپ یہ سمجھتے ہیں کہ ”ہم سب“ ایک مثبت سوچ کو فروغ دے کر ایک بہتر پاکستان کی تشکیل میں مدد دے رہا ہے تو ہمارا ساتھ دیں۔ سپورٹ کے لئے اس لنک پر کلک کریں