امریکا میں مسلح شخص کی فائرنگ سے 50 افراد ہلاک


amrآرلینڈو میں ہم جنس پرستوں کے لئے مخصوص نائٹ کلب میں مسلح شخص نے فائرنگ کردی جس کے نتیجے میں 50 افراد ہلاک اور 53 زخمی ہوگئے جب کہ پولیس کی جوابی کارروائی میں حملہ آور بھی مارا گیا۔
غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق امریکی ریاست فلوریڈا کے شہر آرلینڈو میں مسلح شخص جسم سے بم باندھ کر ہم جنس پرستوں کے لئے مخصوص نائٹ کلب میں داخل ہوا اور اندھا دھند فائرنگ کردی جس کے نتیجے میں 50 افراد ہلاک اور 53 زخمی ہو گئے۔ مسلح شخص نے نائٹ کلب کے اندر موجود متعدد افراد کو یرغمال بھی بنائے رکھا تاہم پولیس کی جوابی کارروائی میں حملہ آور بھی مارا گیا۔
امریکی حکام نے فائرنگ کے واقعے کو دہشت گردی قرار دیا ہے جب کہ ایف بی آئی حکام کا کہنا ہے کہ واقعہ کی تحقیقات کا آغاز کردیا گیا ہے تاکہ پتہ چلایا جا سکے کہ آیا حملہ آور اکیلے ہی فائرنگ میں ملوث تھا یا پھر یہ کہ وہ ممکنہ طور پر اسلامی شدت پسندی سے متاثر ہوسکتا ہے تاہم اس بات کے شواہد نہیں ملے کہ فائرنگ کا واقعہ مقامی یا بین الاقوامی دہشت گردی ہے۔
دوسری جانب امریکی میڈیا کے مطابق حملہ آور کی شناخت 29 سالہ عمر متین کے نام سے ہوئی ہے جو افغان نژاد امریکی شہری ہے،اورلینڈو پولیس کے چیف کا کہنا ہے کہ حملہ آور ایک رائفل اور ایک پستول سے مسلح تھا اور اس نے اپنے ساتھ کسی قسم کا آلہ بھی باندھ رکھا تھا۔
واضح رہے کہ 2 روز قبل بھی آرلینڈو میں ایک مسلح شخص نے میوزک کنسٹرٹ کے دوران فائرنگ کر کے امریکن ٹی وی کے مشہور پروگرام ’دی وائس‘ کی گلوکارہ کرسٹینا گریمی کو ہلاک کردیا تھا۔


Comments

FB Login Required - comments