پرانے لطیفوں کی حکمت: ثنا اللہ گوندل


پرانے لطیفوں میں چھپی حکمت دیر سے سمجھ آتی ہے۔ آپ نے بھی سنا ہوگا کہ ایک انسان نجومی کے پاس گیا اور پوچھا کہ میری دائیں ہتھیلی میں خارش ہوتی ہے۔ نجومی نے کہا ۔ اس کا مطلب ہے تمھیں پیسے ملیں گے۔ اس نے کہا دوسری ہتھیلی میں بھی خارش ہوتی ہے ۔ تو نجومی نے کہا۔ آپ کو بہت زیادہ پیسے ملیں گے ۔ بولا پیر کے تلوے میں بھی خارش ہوتی ہے ۔ نجومی نے کہا آپ سفر پر جائیں گے۔ (ظاہر ہے اتنے پیسے ہونگے تو بیٹھا تھوڑی رہوں گا)
پھر نجومی سے کہا میرے سر میں بھی خارش ہوتی ہے۔
نجومی نے کہا ۔دور ہٹ کے بیٹھو ۔ تمھیں تو خارش کی بیماری لگتی ہے۔

میڈیا اور خفیہ کے نجومیوں نے خان صاحب کو اتنی خوشخبریاں سنائی تھیں ۔ کہ لگتا ہے اب خان صاحب کو بلاوجہ ہی اپنی عظمت کی خارش رہتی ہے۔

ثنا اللہ گوندل

image_pdfimage_print

Comments - User is solely responsible for his/her words

اگر آپ یہ سمجھتے ہیں کہ ”ہم سب“ ایک مثبت سوچ کو فروغ دے کر ایک بہتر پاکستان کی تشکیل میں مدد دے رہا ہے تو ہمارا ساتھ دیں۔ سپورٹ کے لئے اس لنک پر کلک کریں