ریٹائرمنٹ کے بعد کوئی سرکاری عہدہ نہیں لوں گا، انورظہیر جمالی


\"\"

اسلام آباد: سابق چیف جسٹس انور ظہیر جمالی کا کہنا ہے کہ ریٹائرمنٹ کے بعد کوئی عہدہ نہیں لوں گا بھلائی کے کام سرکاری عہدوں کے بغیر بھی کئے جاسکتے ہیں۔

ایکسپریس نیوزکے مطابق لااینڈ جسٹس کمیشن کے نئے آفس کا افتتاح کرنے کے بعد میڈیا سے بات کرتے ہوئے سابق چیف جسٹس انورظہیر جمالی کا کہنا تھا کہ ریٹائرمنٹ کے بعد کوئی بھی سرکاری عہدہ نہیں لوں گا کیوں کہ عوام کی خدمت کے لئے کسی عہدے کی ضرورت نہیں ہوتی صرف جذبہ ہونا لازمی ہے بھلائی کے کام سرکاری عہدوں کے بغیر بھی کئے جاسکتے ہیں۔

سابق چیف جسٹس نے لا اینڈ جسٹس کے دورے کے دوران افسران کو ہدایت کی کہ غیر ضروری اے سی اور لائٹس نہ جلائیں بلکہ بجلی کی بچت کو اپنا شعار بنائیں۔

واضح رہے کہ انور ظہیر جمالی 30 دسمبر کو اپنے عہدے سے ریٹائر ہوئے ہیں جس کے بعد جسٹس میاں ثاقب نثار نئے چیف جسٹس آف پاکستان مقرر ہوئے ہیں۔


Comments

'ہم سب' کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں ہے۔ کمنٹ کرنے والا فرد اپنے الفاظ کا مکمل طور پر ذمہ دار ہے اور اس کے کمنٹس کا 'ہم سب' کی انتظامیہ سے کوئی تعلق نہیں ہے۔