لندن فلیٹس کی خبر پر قائم ہیں، رپورٹر کے خلاف کوئی تحقیقات نہیں ہورہی، بی بی سی


\"\"

بی بی سی نے گزشتہ روز سوشل میڈیا سمیت پاکستانی ذرائعِ ابلاغ میں شائع ہونیوالی ان خبروں کی تردید کی ہے کہ ’’پارک لین فلیٹس، کب خریدے گئے، کب بِکے‘‘ کی سرخی کے تحت شائع ہونیوالی خبر یا رپورٹر کے خلاف کسی قسم کی کوئی اندرونی تحقیقات کی جا رہی ہے۔ بی بی سی کے مطابق اس خبر کی وضاحت کے لیے کسی نے ادارے سے کوئی رابطہ نہیں کیا البتہ سوشل میڈیا اور پاکستان کے ذرائع ابلاغ میں اس خبر پر تحقیقات کے حوالے سے شائع ہونیوالی خبروں میں کوئی صداقت نہیں۔

واضح رہے کہ بی بی سی نے اس خبر کو اپنی صحافتی اقدار اور ادارتی معیار پر پورا اترنے کے بعد شائع کیا تھا۔


Comments

'ہم سب' کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں ہے۔ کمنٹ کرنے والا فرد اپنے الفاظ کا مکمل طور پر ذمہ دار ہے اور اس کے کمنٹس کا 'ہم سب' کی انتظامیہ سے کوئی تعلق نہیں ہے۔

اسی بارے میں: ۔  پاکستان نے کلبھوشن جادھو سے ان کی اہلیہ کی ملاقات کرانے کی پیشکش کی ہے