شان کے ساتھ کام کرکے بہت کچھ سیکھنے کو ملا: عمائمہ ملک


amaimaمعروف اداکارہ وماڈل عمائمہ ملک نے کہا ہے کہ فلم سٹار شان مجھے بچپن سے پسند تھے اوران کے ساتھ ” ارتھ ٹو“میں کام کرتے ہوئے بہت کچھ سیکھنے کوملا‘ وہ بہت ہی منجھے ہوئے اداکار، ہدایتکاراورسپورٹ کرنے والے انسان ہیں۔
ان خیالات کا اظہار عمائمہ ملک نے ”ایکسپریس“ کوخصوصی انٹرویودیتے ہوئے کیا۔ انھوں نے کہا کہ فلم کی کامیابی اور ناکامی سب قسمت کی بات ہیں، مگرایک بات طے ہے کہ فلم کوبنانے کے لیے بہت محنت درکارہوتی ہے۔ پاکستان اور بھارت میں کام کرنے کا انداز مختلف ہے لیکن اچھی ٹیم، کہانی اورکردارکسی بھی فلم کو سپرہٹ بنانے میں اہم کردار ادا کرتے ہیں۔ میں نے پاکستان میں ایکٹنگ شروع کی اور یہاں پر کام کرتے ہوئے مجھے بھارت جانے کا موقع ملا۔ میں نے بالی ووڈ کے ایک بڑے بینرکی فلم میں کام کیا اور میری فلم کوایک بڑی اوپننگ بھی ملی جوکسی بھی نئے فنکاراورفلم کے لیے بہت خوش آئند ہوتا ہے۔
”راجا نٹورلال“ میری دوسری فلم تھی، اس سے پہلے اداکار سنجے دت کے ساتھ فلم ”شیر“ بنی تھی۔ اسی طرح ابھی بھی بالی ووڈ میں دو نئے پراجیکٹ میں کام کر رہی ہوں لیکن فی الحال اپنے معاہدے کے مطابق ان کی تفصیلات سے آگاہ نہیں کرسکتی مگراتنا ضرورکہہ سکتی ہوں کہ دونوں پراجیکٹ میرے چاہنے والوں کے لیے سرپرائز ثابت ہوں گے۔
ایک سوال کے جواب میں عمائمہ نے کہا کہ اس وقت پاکستان فلم انڈسٹری بڑی تیزی کے ساتھ ترقی کی جانب گامزن ہے۔ کارپوریٹ سیکٹرکی سپورٹ اور اچھوتے موضوعات پربننے والی فلمیں شائقین کی توجہ حاصل کررہی ہیں۔ اس سے پہلے کارپوریٹ سیکٹر فلمسازی کے شعبے کی سپورٹ کے لیے کبھی نہیں آتا تھا مگراب تبدیلی دکھائی دے رہی ہے۔
جدید سینما گھر بن رہے ہیں اورفلموں کا معیار ہرلحاظ سے بین الاقوامی سطح کے عین مطابق ہورہا ہے۔ یہی وجہ ہے کہ میری فلم ”ارتھ ٹو“ سے مجھے بہت سی تو قعات وابستہ ہوچکی ہیں۔ شان نے جس طرح سے اس فلم کوبنایا ہے اور سجا سنوار رہے ہیں، اس کے بہت سے مثبت نتائج سامنے آئیں گے۔


Comments

FB Login Required - comments