گجرات میں پسند کی شادی کے لئے ضد پر لڑکی کو گھروالوں نے زندہ جلا دیا


گجرات کے نواحی گاؤں سوک کلاں میں پسند کی شادی کے لئے ضد کرنے پر گھر والوں نے 22 سالہ لڑکی کو زندہ جلا دیا جو زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑ گئی۔
اطلاعات کے مطابق گجرات کے گاؤں سوک کلاں میں 22 سالہ لڑکی پسند کی شادی کرنا چاہتی تھی جس پر اس کی ماں، نانا اور بھائیوں نے ناراضی کا اظہار کیا اور لڑکی کو کمرے میں بند کرکے پیٹرول چھڑک کر آگ لگا دی تاہم بعد میں لڑکی کو اسپتال منتقل کیا گیا جہاں وہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑ گئی۔
واقعے کی اطلاع ملنے پر پولیس نے لڑکی کی ہلاکت سے قبل کا اس بیان قلمبند کیا تھا جس کی روشنی میں اسے کے بھائی، ماں اور نانا کے خلاف مقدمہ درج کرکے انہیں حراست میں لے لیا گیا ہے۔

image_pdfimage_print

Comments - User is solely responsible for his/her words

اگر آپ یہ سمجھتے ہیں کہ ”ہم سب“ ایک مثبت سوچ کو فروغ دے کر ایک بہتر پاکستان کی تشکیل میں مدد دے رہا ہے تو ہمارا ساتھ دیں۔ سپورٹ کے لئے اس لنک پر کلک کریں