کہانی اور میوزک کسی بھی فلم کی کامیابی کی ضمانت ہوتے ہیں: آمنہ شیخ


amnia shaikhمعروف اداکارہ وماڈل آمنہ شیخ نے کہا ہے کہ پاکستان میں فلمسازی کا عمل بہترین ہورہا ہے اورنوجوان فلم میکرز اچھوتے موضوعات پرفلمیں بنا کرسینما گھروںکی رونقیں بحال کررہے ہیں۔
اپنے خاوند اداکارمحب مرزا کی صلاحیتوں پرپورا بھروسہ ہے اوربڑی سکرین کے لیے ایک ایسا ستارہ ثابت ہوں گے جس کی روشنی سے سلور سکرین اورچمکنے دمکنے لگے گی۔ ان خیالا ت کا اظہارآمنہ شیخ نے ایک نجی ٹی وی چینل سے گفتگوکرتے ہوئے کیا۔ انھوں نے کہا کہ کسی بھی فلم کی کامیابی کی ضمانت اس کی بہترین کہانی، کرداراورمیوزک ہوتے ہیں۔ خوش قسمتی سے ہمارے نوجوان فلم میکرز جہاں فلمسازی کے شعبے میں جدید ٹیکنالوجی کا استعمال کررہے ہیں اوراس کے ساتھ ساتھ نوجوان فنکاروں کوکام کا عمدہ موقع فراہم کررہے ہیں، جوبہت خوش آئند عمل ہے۔
دنیا بھرکی بڑی فلم انڈسٹریوں کی کامیابی کی سب سے بڑی وجہ نوجوانوں کو بہترمواقع کی فراہمی ہے۔ اگریہ لوگ ایسا نہ کرتے توشایدآج وہ بہت پیچھے رہ جاتے۔ ہمارے پڑوسی ملک بھارت کی فلم انڈسٹری بالی ووڈکاشماردنیا کی بڑی فلم انڈسٹریوں میں ہوتاہے اوراس کا تمام ترکریڈٹ نوجوان فلم میکرز کوجاتاہے۔ کیونکہ وہاں پرکام کرنے والے سینئرزنے نوجوانوںکو اپنے ساتھ کام کرنے اورسیکھنے کا موقع فراہم کیا جس کی وجہ سے آج وہاں چند بڑے ناموں کے بجائے بہت سے ایسے مقبول اورباصلاحیت لوگ موجود ہیں جن کانام ہی فلم کی کامیابی کے لیے بہت ہوتا ہے۔ ہمیں بھی اسی طرح کی پالیسی اپنانا ہوگی۔ ہمارے ملک میں بھی باصلاحیت لوگوںکی کوئی کمی نہیں ہے اورفلمسازی کے لیے کارپوریٹ سیکٹر بھی بھرپورتعاون کررہا ہے۔
اب توصرف ہمیں اپنی درست سمت کا انتخاب کرنا ہے۔ ایک سوال کے جواب میں آمنہ شیخ نے کہا کہ پاکستان فلم انڈسٹری کی سپورٹ کے لیے ہمیں ایسی فلمیں زیادہ سے زیادہ بناناہونگی جن کودیکھنے والے کی تعداد زیادہ ہے۔ اس لیے پہلی ترجیح کمرشل سینما ہونی چاہیے اوراس کے بعد دوسرے موضوعات کی فلمیں سینماگھروں اورفلم فیسٹیولز کے لیے پیش کی جائیں۔ ہم سب کو مل کراس حوالے سے سنجیدگی سے سوچنا ہوگا۔ اگرآج بھی بہتری اوربحالی کے لیے بنا پالیسی کام کیا گیا توحالات کسی بھی موڑ پرتبدیل ہوسکتے ہیں اوراس سے بہت بڑامالی نقصان ہوگا بلکہ پاکستان فلم انڈسٹری پھر سے بحران کا شکار ہو جائے گی۔


Comments

FB Login Required - comments