اسرائیلی فوج نے چار مبینہ حملہ آورفلسطینی نوجوان ہلاک کر دیے


israelاسرائیلی فوج نے کہا ہے کہ غربِ اردن میں اسرائیلی فوجیوں پر حملہ کرنے کی کوشش کرنے والے چار فلسطینی نوجوانوں کو ہلاک کر دیا گیا ہے۔ چاروں حملہ آوروں کو دو مختلف واقعات میں ہلاک کیا گیا ہے۔
فلسطینی حکام نے بھی ان ہلاکتوں کی تصدیق کی ہے تاہم ان حملوں میں کسی اسرائیلی فوجی کے زخمی ہونے کی کوئی اطلاع نہیں ملی ۔
گزشتہ مہینوں میں اسرائیل اور فلسطینیوں کے درمیان کشیدگی میں اضافہ دیکھنے میں آیا ہے۔
اسرائیلی فوج نے ایک بیان میں کہا ہے کہ ’چاقوو¿ں ے لیس تین حملہ آوروں نے پہرہ دینے والے فوجیوں پر حملہ کرنے کی کوشش کی تھی۔ اس واقعے کے فوری بعد بیت الخلیل کے نزدیک ایک اور فلسطینی شہری نے اسرائیلی فوج پر حملہ کرنے کی کوشش کی جس میں وہ خود مارا گیا۔‘
فلسطینی میڈیا کے مطابق ہلاک ہونے والے حملہ آوروں کی عمریں 20 سے 22 سال کے درمیان تھیں۔
گذشتہ سال اکتوبر سے اب تک فلسطینیوں کی جانب سے چاقووں کے حملے، گاڑی کی ٹکر اور فائرنگ کے نتیجے میں 22 اسرائیلی شہری ہلاک ہوئے ہیں جبکہ اسی دوران اسرائیلی فوجیوں کے ہاتھوں 140 فلسطینی شہری مارے گئے ہیں۔
یاد رہے کہ امریکہ نے اسرائیل اور فلسطین کے درمیان بڑھتے ہوئے تناو پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے دونوں سے کہا ہے کہ مذاکرات کا سلسلہ بحال کر کے مسائل حل کیے جائیں۔


Comments

FB Login Required - comments