ریل کی سیٹی – سنگ میل


ریل کی سیٹی

ہندوستان کی سرزمین پہ 16 اپریل 1853 کے دن پہلی بار ریل چلی تھی۔ جس طرح پل بنانے والے نے دریا کے اس پار کا سچ، اس پار کے حوالے کیا، اسی طرح ریل کے انجن نے فاصلوں کو نیا مفہوم عطا کیا۔

اباسین ایکسپریس، کلکتہ میل اور خیبر میل، صرف ریل گاڑیوں کے نام نہیں بلکہ ہجر، فرق اور وصل کے روشن استعارے تھے۔ اب جب باؤ ٹرین جل چکی ہے اور شالیمار ایکسپریس بھی مغلپورہ ورکشاپ کے مرقد میں ہے، میرے ذہن کے لوکوموٹیو شیڈ میں کچھ یادیں، بار بار آگے پیچھے شنٹ کر رہی ہیں۔

یہ وہ باتیں ہیں جو میں نے ریل میں بیٹھ کر تو کبھی دروازے میں کھڑے ہو کر خود سے کی ہیں۔ وائی فائی اور کلاؤڈ کے اس دور میں، میں امید کرتا ہوں میرے یہ مکالمے آپ کو پسند آئیں گے۔

محمد حسن معراج

کتاب خریدنے کے لئے مندرجہ ذیل لنک پر کلک کریں

ریل کی سیٹی

ISBN No: 9693529499
Author: MUHAMMAD HASSAN MIRAJ
Publisher: SMP
Language: URDU
Subject: URDU LITERATURE
Year: 2016
Price: RS  1200

Comments

'ہم سب' کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں ہے۔ کمنٹ کرنے والا فرد اپنے الفاظ کا مکمل طور پر ذمہ دار ہے اور اس کے کمنٹس کا 'ہم سب' کی انتظامیہ سے کوئی تعلق نہیں ہے۔

اسی بارے میں: ۔  Beyond Our Degrees of Separation - Sang-e-Meel