ڈسکہ میں وکلا کو قتل کرنے والے ایس ایچ او کو چار مرتبہ سزائے موت کا حکم


\"shahzadڈسکہ بار کے صدر رانا خالد عباس اور عرفان چوہان ایڈووکیٹ کے قتل کیس میں عدالت نے ایس ایچ او شہزاد وڑائچ کو چار مرتبہ سزائے موت کا حکم دیدیا۔
انسداد دہشت گردی کی خصوصی عدالت کے جج چودھری امتیاز احمد نے ڈسکہ بار کے صدر رانا خالد عباس اور عرفان چوہان ایڈووکیٹ کے قتل کیس کا فیصلہ سنا دیا۔ فیصلے میں ایس ایچ او شہزاد وڑائچ کو 4 مرتبہ سزائے موت اور مجرم کو مقتولین کے ورثا کو 4 لاکھ روپے معاوضہ اور دیت کی ادائیگی کا حکم دیا۔ عدالت نے مجرم کو وکیل سمیت 3 افراد کو زخمی کرنے کے جرم میں 30 سال قید بامشقت کا حکم بھی دیا۔ واضح رہے گزشتہ سال ڈسکہ میں ایس ایچ او شہزاد وڑائچ کی فائرنگ سے نے ڈسکہ بار کے صدر رانا خالد عباس اور عرفان چوہان ایڈووکیٹ جاں بحق ہو گئے تھے۔

image_pdfimage_print

Comments - User is solely responsible for his/her words

اگر آپ یہ سمجھتے ہیں کہ ”ہم سب“ ایک مثبت سوچ کو فروغ دے کر ایک بہتر پاکستان کی تشکیل میں مدد دے رہا ہے تو ہمارا ساتھ دیں۔ سپورٹ کے لئے اس لنک پر کلک کریں