سوئٹزرلینڈ میں دنیا کی سب سے ڈھلواں ریلوے لائن کا افتتاح


ریل

EPA

دنیا کے سب سے زیادہ ڈھلواں ریل راستے کا افتتاح آج سوئٹزر لینڈ میں ہو رہا ہے۔

اس ریلوے لائن پر پانچ کروڑ 30 لاکھ امریکی ڈالر کا خرچ آیا ہے اور اسے مکمل ہونے میں 14 سال لگے ہیں۔

یہ پہاڑی ریل لائن شاوز شہر سے سٹوس گاؤں تک جاتی ہے اور چار منٹ میں یہ اپنا سفر پورا کرتی ہے۔

یہ ریلوے لائن اتنی ڈھلواں ہے کہ اس کے لیے مخصوص قسم کی بوگیاں بنائی گئی ہیں تاکہ نیچے جاتے ہوئے یا اوپر آتے ہوئے مسافر ٹھیک سے بیٹھے رہ سکیں۔

یہ بھی پڑھیں

٭ ریلوے سٹیشن آپ کی نظر سے

٭ یورپ کا بھوت ٹرین سٹیشن پھر سے زندہ ہو گا؟

اس کے انوکھے ڈیزائن کی وجہ سے جب ریل نیچے یا اوپر جا رہی ہوتی ہے تو بیرل کی شکل کے اس کے کمپارٹمنٹ از خود توازن بنا لیتے ہیں۔

ریل

EPA

یہ ریلوے لائن سطح سمندر سے 1300 میٹر کی بلندی پر بنائی گئی ہے اور سوئٹزرلینڈ کی صدر ڈورس لوتھارڈ اس کا افتتاح کریں گی۔

اطلاعات کے مطابق کئی جگہ یہ ٹرین 110 فی صد تک ترچھی ہو جاتی ہے۔ 1738 میٹر کے راستے میں 743 میٹر چڑھائی ہے۔ اس کی رفتار کے بارے میں کہا جا رہا ہے کہ یہ 10 میٹر فی سیکنڈ کی رفتار سے چلے گی۔

سوئٹزرلینڈ میں ریلوے کے ترجمان ایوان سٹینر نے کہا: ’14 سال کی منصوبہ بندی اور تعمیر کے بعد سب کو اس ٹرین پر فخر ہے۔’

image_pdfimage_print

Comments - User is solely responsible for his/her words

اگر آپ یہ سمجھتے ہیں کہ ”ہم سب“ ایک مثبت سوچ کو فروغ دے کر ایک بہتر پاکستان کی تشکیل میں مدد دے رہا ہے تو ہمارا ساتھ دیں۔ سپورٹ کے لئے اس لنک پر کلک کریں

بی بی سی

بی بی سی اور 'ہم سب' کے درمیان باہمی اشتراک کے معاہدے کے تحت بی بی سی کے مضامین 'ہم سب' پر شائع کیے جاتے ہیں۔

british-broadcasting-corp has 4197 posts and counting.See all posts by british-broadcasting-corp