کوئی تو میاں صاحب سے پوچھے

ہمارے تین بار کے وزیرِ اعظم المعروف شہنشاہِ جمہوریت مع صاحبزادی یعنی مستقبل کی ملکہء جمہوریت لندن سے وطن پدھارکر سیدھے اڈیالہ کی سلاخوں کے پیچھے جا پہنچے ہیں۔ واپسی کے اس سفرمیں ن لیگ کے حامیوں کے انبوہِ کثیر کے ساتھ ساتھ صحافیوں اور اینکرز کا ایک جمِ غفیربھی ہمراہ تھا۔ اس سفر سے…

Read more

چڑھ جا سولی، رام بھلی کرے گا

میاں نواز شریف گزشتہ کئی برس سے بزعم خود ایسا لیڈر تصور کئے ہوئے ہیں کہ ان کا نام تاریخ کے صفحات میں سنہری حروف سے لکھا جائے اورخود کو طیب اردگان، مہاتیر محمد اور نیلسن مینڈیلا سے کسی طور کم نہیں سمجھتے۔ حالاں کہ محکمۂ زراعت والوں نے جس پودے کو خود اپنے ہاتھوں…

Read more

ہم مہوش کے مجرم ہیں

اُس نے دھڑکتے دل کے ساتھ بس کے پائیدان پر قدم رکھا اور جب وہ دو قدم اوپر گئی تواسے انجانے خوف نے گھیر لیا کہ وہ کیسے ان سب کاسامنا کرے گی جیسے ہی اس کی نظر مسافروں پر پڑی تو ایسا محسوس ہوا کہ اسے ابھی یہاں نہیں آنا چاہیے تھا۔ بہر حال…

Read more