ملیے بہاولپور کے ایک حیرت انگیز شخص سے

میں ان دنوں نیا نیا بہاولپور میں تعینات ہوا تھا اور شام کو اپنے کیمپ آفس میں بیٹھا ڈاک نکال رہا تھا کہ میرے پی اے، شاہد نے ایک پرانی نوٹ بک میرے سامنے لا رکھی۔ "یہ کیا ہے؟" میں نے نوٹ بک کھولے بغیر اس سے پو چھا۔ اس نے بہاولپور کی تحصیل احمد…

Read more

اپنی مرحومہ ماں کے نام، اِک بیٹی کا پیغام

پیاری ماں، ہاں اچھی ماں ٹھنڈی، میٹھی، گھنیری چھاں لوٹ بھی آ کہ بیٹھی ہوں میں آج بھی رستہ تکتی ہوں یہ بھلا کیا بات ہوئی تو دور گُلوں میں بیٹھی ہے اور ہم دنیا میں تنہا ظالم زمانوں سے لڑتی ہیں اور پھر دنیا والےکہاں کے اچھے لڑتے لڑتے تھکتی ہوں میں آج بھی…

Read more