یورپی جنت کے لالچ میں ترکی میں پھنسے غیر قانونی پاکستانی

گزشتہ روز ہمارے اخبار کی شہ سرخیوں میں سے ایک کے مطابق پاک ایران سرحد عبور کرتے ہوئے ایرانی سیکیورٹی فورسز کے ہاتھوں دو پاکستانی ہلاک اور چار زخمی ہوئے۔ مجھے اسی راستے سے ایران ترکی یورپ تک سفر کرنے کا متعدد بار تجربہ ہوا ہے۔ 1983 ء میں پہلی بار اس سرحد کو عبور…

Read more

عمران خان ایک کامیاب رہبر، مگر کیسے

وزیراعظم عمران خان جس جوش سے اپوزیشن رہبر کے طور پر متحرک تھے، کاش اُسی جذبے، حکمت، دانش، فیصلہ سازی اور وژنری انداز میں حکمرانی میں بھی کامیاب ہوں۔ یہ کہنا کہ پچھلی حکومتیں ورثے میں بہت مسائل دے گئی ہیں، حالات کو ٹھیک ہونے میں بہت وقت لگے گا، کامیاب رہبر کبھی ایسے بیانات…

Read more

ریاست اب تو جاگ

ہر قسم کے نظریاتی وسیاسی تجربات کے بعد بھی کیا ہم نے آگے کی جانب سفر کیا ہے؟ اپنے تمام تر دعووں کے مطابق جن میں ایک دعویٰ یہ بھی ہے کہ ہم امت مسلمہ کی قیادت کے لیے پیدا کیے گئے ہیں، کیا ہم خود اپنی قیادت کرنے میں کامیاب ہوئے ہیں؟ پاکستانی ریاست کی کامیابی، پاکستانی قوم کی قیادت کی کامیابی، ذرا مجھے بتائیں کہ کدھر ہے؟ قراردادِ مقاصد سے لے کر 1973 ء کے اسلامی آئین کی تشکیل اور پھر اس میں جو اسلامی سقم تھے، ان کو جنرل ضیا الحق نے پورا کرکے مکمل اسلامی ریاست میں ڈھال دیا۔

Read more

بھارت میں کسان تحریک، ایک نیا سیاسی ابھار

تقریباً اسّی کروڑ سے زائد دیہی آبادی کے ساتھ بھارت کے دیہات روئے زمین پر مسائل سے بھرے علاقے ہیں۔ میڈیا کوریج اور سرمایہ کاری کے ضمن میں یہ دنیا کے نظرانداز ترین علاقے بھی ہیں۔ سینئر صحافی اور پیپلز آرکائیو آف رورل انڈیا کے بانی جناب پی سائی ناتھ کا کہنا ہے کہ ملکی میڈیا کے نزدیک ہندوستانیوں کی اکثریت کا کوئی وجود ہی نہیں یعنی 75 فیصد ہندوستانی آبادی تو ان کے نزدیک وجود ہی نہیں رکھتی۔ دہلی کے سینٹر آف میڈیا سٹڈیز کے مطابق، بھارت کے قومی اخبارات میں زراعت پر پانچ سالہ اوسط رپورٹنگ تمام تر خبروں کا محض 0.61 فیصد ہے۔

Read more

ہمارے ترقی پسند، سہاروں پر چلنے لگے

پاکستان کی سیاست میں بائیں بازو کی سیاست اپنی آواز کو بھرپور طریقے سے بلند کرتی نظر نہیں آرہی۔ اس پر صرف یہ دلیل دے دینا کافی نہیں کہ سرد جنگ کے خاتمے کے بعد ترقی پسند سیاست بری طرح متاثر ہوئی اور پھر وہ لوگ جو کبھی ترقی پسند سیاست میں سرگرم تھے، انہوں…

Read more

جمال خاشقجی کا قتل، استنبول کے سینے میں ایک اور راز

استنبول دوہزار سال سے زیادہ عرصہ میں عالمی سیاست کا اہم شہر ہے۔ اس تاریخی بستی کو فنیقی تاجروں نے آباد کیا۔ بعد میں رومن، بازنطینی، عثمانی اور جدید ترکی کے قیام تک اس شہر کو یہ منفرد اعزاز حاصل ہوا ہے کہ بانوے سے زائد حکمرانوں نے یہاں بیٹھ کر حکمرانی کی۔ میرے لیے…

Read more

جمال خاشقجی کا معمہ، امریکہ کو مشرقِ وسطیٰ میں مشکلات

سعودی صحافی جمال خاشقجی کے معاملے نے امریکی صدر ٹرمپ کی جانب سے ایران پر معاشی پابندیوں کے نفاذ کی مہم کو کمزور کیا ہے جس کا مقصد ایران میں حکومت کی تبدیلی پر اثرانداز ہونا تھا۔ سعودی عرب، عرب دنیا میں امریکہ کا مرکزی اتحادی ہے سو جب اس کی ساکھ متاثر ہوگی تو…

Read more

عمران خان کے گرد موجود لوگ انہیں ناکام کر رہے ہیں

نومنتخب حکومت کے ابھی سو دن پورے نہیں ہوئے۔ روزِاوّل سے آج تک حکومت سازی سے لے کر سیاسی، اقتصادی اقدامات تک، نئی حکومت سوالیہ نشان بنی ہوئی ہے۔ اس کی اہم وجہ نومنتخب وزیراعظم عمران خان کی طرف سے پچھلے چند سالوں سے کیے جانے والے بڑے سیاسی دعوے ہیں۔ اگر اُن کا تعلق…

Read more

بے زمین کو زمین، بے تعلیم کو تعلیم دو

میرے لیے یہ خبر نہیں کہ نئی حکومت نے آئی ایم ایف سے قرضہ حاصل کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ یہ اُن کے لیے خبر ہونی چاہیے جو نئی حکومت کے وزیراعظم جناب عمران خان کے دعووں سے انہیں ایک معجزہ گیر لیڈر سمجھ بیٹھے تھے کہ وہ واقعی اقتدار میں آنے کے بعد قرضہ حاصل کرنے والا کشکول توڑ دیں گے۔ یہ کشکول صرف 1971ء میں اقتدار میں آنے کے بعد ذوالفقار علی بھٹو نے وزیرخزانہ ڈاکٹر مبشر حسن کی ذریعے توڑی تھی۔ ذوالفقار علی بھٹو نے عالمی مالیاتی اداروں بشمول ورلڈ بینک، اپنے اقتدار کے پانچ سالوں میں ایک ڈالر بھی قرض نہ لیا۔ اور یاد رہے وہ پاکستان اِس پاکستان سے کہیں بدحال، پست اور شکست خوردہ تھا۔ آدھے سے زیادہ پاکستان(مشرقی پاکستان) الگ ہوچکا تھا۔ فوج ایک افسوس ناک شکست کا سامنا کرچکی تھی۔ آج کا پاکستان اُس سے کہیں بہتر ہے

Read more

طیب ایردوآن عمران خان سے شدید ناراض ہیں

جب بھی نئی حکومت اقتدار میں آتی ہے توایک ہی جملہ نئی حکومت کے وزرا اور لیڈر کہتے ہیں، ہمیں مسائل ورثے میں ملے ہیں، ان کو حل کرنے میں وقت لگے گا۔ دلچسپ بات یہ ہے کہ ہر نئی حکومت میں اکثر چہرے وہی ہوتے ہیں جو پچھلی کسی حکومت میں پانچ دس سال…

Read more