مارننگ شو میں طالبات کا رقص اور سماج کی اچھل کود

دو عورتوں نے پوری بستی کے مردوں کی اجتماعی غیرت کو چیلنج کیا ہے۔ تو عدالت کب لگ رہی ہے؟ حالانکہ اس کی اب ضرورت نہیں۔ کیونکہ بستی کے سرداروں نے فیصلہ دے دیا ہے کہ ”دونوں خواتین طوائف ہیں“۔

مقدمہ: یونیورسٹی میں پڑھنے والی دو خواتین نے ایک مارننگ شو میں رقص کیا ہے۔
مقدمے کے مدعی، گلگت بلتستان کی تہذیب، ثقافت، اخلاقیات اور مذہب کے خود ساختہ چوکیدار اور ٹھیکیدار ہیں۔

Read more