ہم عرض کریں گے تو شکایت ہو گی

سال پرانی بات ہے۔ یہی دِن تھے اور قائداعظم یونیورسٹی مکمل طور پر میدان جنگ کی سی صورت اختیارکیے ہوئے تھی۔ گرچہ فضا ہر طرح کی افواہوں سے پُر تھی تاہم اِکّا دُکّا ذرائع سے خبر ملتی کہ یونیورسٹی کی طلباء تنظیم چالیس دِن سے اپنے مطالبات لئے کھلے آسمان تلے بیٹھی سراپہ احتجاج ہے۔…

Read more