لوگ سمجھتے ہیں آساں ہے ترجمان ہونا

گو کہ سیاست ہمارا خاندانی کاروبار ہے مگر اسے بھی وسعت دینے کی لیے اور بقول مرشد، ”کمپنی کی مشہوری“ کے لئے نوکری کرنا ضروری ہے۔ آج میرے سیاسی کیریئر کا ایک اہم دن تھا، میری نئی پارٹی کو ترجمان درکار ہیں اور اس کے لیے الیکشن کے بعد اشتہار دے کر درخواستیں موصول کی گئیں۔ میں نے بھی اس نوکری کے لئے درخواست جمع کرائی اور آج میرا انٹرویو تھا۔

ترجمان بننے کے لئے کئی مہارتیں درکار ہوتی ہیں، مثال کے طور پر بغیر سوچے بولنا، وہ بھی لگاتار، کوئی آسان بات ہے؟ جھوٹ بول کر اس پر قائم رہنا اور اس کا دفاع بھی کرنا، بڑی کشت سے اس میں مہارت حاصل ہوتی ہے۔ کچھ لوگ اس کشت کو ڈھٹائی کا نام دیتے ہیں جبکہ مرشد نے بتایا تھا کہ یہ مستقل مزاجی ہوتی ہے۔ ترجمان کا انتخاب میرٹ پر ہونا ہے اور چونکہ ہماری پارٹی عین جمہوری ہے سو حتمی منظوری پارٹی قائد اور ان کے بیٹے ہی دیں گے۔

Read more

کچھ بات حرفِ ”چ“ کے بارے میں

اُردو حروفِ تہجی میں مجھے حرفِ ”چ“ بے حد پسند ہے۔ یہ محض ایک حرف ہی نہیں ایک کثیر الجہت اور جامع ترین اصطلاح ہے۔ یہ اپنے اندر بے شمار معنی و مفہوم لیے ہوتی ہے۔ اور کئی صلاواتیں اپنی چادر میں سمو کر کہنے والے کو اطمینانِ قلب عطا کر دیتی ہے۔

حروفِ تہجی میں جس قدر مقبولیت آج کل ”چ“ کو حاصل ہے ویسی کسی اور کے نصیب میں نہیں آئی۔ یہی وجہ ہے کہ ”چ“ سے اس کے تمام ہم جولی حاسد ہیں۔

حرف ”چ“ اکثر اوقات کسی انسان کے مکمل تعارف کے لیے خود کو موزوں ترین اصطلاح بنا کر پیش کرتا ہے۔ اس سے وقت اور توانائی دونوں کی بچت ہوتی ہے اور اس کے بعد کسی اور وضاحت کی چنداں ضرورت نہیں رہتی۔ مثال کے طور آپ کسی سے پوچھیں، یہ بندہ کیسا ہے؟ اور اگلا شخص آپ سے کہہ دے، نہایت ”چ“ آدمی ہے۔ آپ کی ذہن میں ایک دم اس کی شخصیت عیاں ہو جائے گی اور آپ کو مزید کچھ پوچھنے کی حاجت باقی نہ رہے گی۔ ”چ“ کی اصطلاح ایک جادو منتر ہے۔

Read more

مجھے صحافی بننا ہے

یقین کریں، میں ایک بہت سنجیدہ لکھاری ہوں، مگر میرے دو مسٰلے ہیں۔ ایک، سنجیدہ بات لکھتے ہیں ہوئے میرا ”ہاسا“ نکل جاتا ہے اور دوسرا وہ چیز نکل جاتی ہے جس کا ذکر میں یہاں نہیں کر سکتا۔ میں نے ایک بار اپنے مفتی صاحب سے پوچھا، حضرت کیا اس سے میرا وضو ٹوٹ…

Read more