بلال غوری کا ناقابلِ اشاعت کالم: قبروں سے ہڈیاں نکال کر ٹرائل کا فلسفہ

ہمارے ہاں معاشرتی بانجھ پن اور بے نوری کا ماتم کرنے والوں کی کوئی کمی نہیں۔ مایوسی کا پرچار کرنے والے صبح شام یہ باور کرانے میں لگے رہتے ہیں کہ اب وہ ”بابے ‘‘ نہیں رہے جو شوقِ کمال یا خوفِ زوال سے بے نیاز ہو اکرتے تھے۔ سچ تو یہ ہے کہ معاملے…

Read more

پچاس لاکھ گھر، فلاحی یا ’’خلائی‘‘منصوبہ؟

روسی مدبر نکیتا خورشیف نے کہا تھا ’’سیاستدان ہر جگہ ایک جیسے ہوتے ہیں۔یہ وہاں بھی پُل بنانے کا وعدہ کر لیتے ہیں جہاں کوئی دریا ہی نہیں ہوتا۔‘‘ خدا جانے نکیتا خورشیف نے یہ بات کس تناظر میں کہی اور انکا اشارہ کس طرف تھا مگر میں جب بھی کپتان کے نئے پاکستان کا…

Read more

نئے کرائے دار اور اصل مالکان

ہمارے ہاں جب بھی کوئی نئی حکومت آتی ہے تو خودداری اور خود انحصاری کا نعرہ مستانہ بلند کرتے ہوئے کشکول توڑنے کو اپنا فرض منصبی سمجھا جاتا ہے۔ سادہ لوح عوام فرط جذبات سے زندہ باد کے نعرے لگاتے ہیں۔ ان نعروں کی گرد بیٹھتے ہی نئی حقیقت منکشف ہوتی ہے تو لوگ نیا…

Read more

ناقابلِ اشاعت کالم: بابا راولپنڈی سرکار بتائیں کہ یہ کرامت ہے یا حماقت

بدنام زمانہ پانامہ کیس کی سماعت کے دوران سپریم کورٹ کے ایک معزز جج نے تشویشناک انداز میں کہا :”ہمارے لئے نیب وفات پاگیا‘‘سب کو فکرلاحق ہو گئی کہ اب کیا ہوگا؟ نیب کے جسد خاکی کی تجہیزو تکفین کیسے ہوگی؟ سیاسی جماعتوں کا خیال تھا شاید وہ اپنے اس ازلی دشمن کو موت کے…

Read more

رانا مشہود کا بیان حادثہ تھا یا منصوبہ؟

سیاست میں حادثاتی طور پر کچھ  نہیں ہوتا، اگر کوئی حادثہ بھی ہو تو آپ شرطیہ طور پر کہہ سکتے ہیں کہ اس کی منصوبہ بندی کی گئی تھی۔(سابق امریکی صدر، فرینکلن ڈی روزویلٹ) رانا مشہود کا بیان خیال خام ہی تھا مگر اس پر ردعمل نے اسے چھو کر پارس پتھر کی طرح کندن…

Read more

خون چوس نوکر شاہی

قیام پاکستان کے بعد شاید ہی کوئی ایسی سویلین حکومت آئی ہو جس نے افسر شاہی کو نکیل ڈالنے کی کوشش نہ کی ہو ۔لیکن مرض بڑھتا گیا جوں جوں دواکی کے مصداق بتدریج صورتحال گمبھیر ہوتی چلی گئی۔جب بھی کوئی حکومت بیوروکریسی کا قبلہ درست کرنے کانعرہ مستانہ بلند کرتی ہے تو مجھے مائیکرو…

Read more

نئی حکومت کا شوق ٹاسک فورس ۔ اور ان کے کمالات

(things change, the more they stay the same. (French writer Jean Baptiste Alphonse Ka پرانے پاکستان میں قومی اہمیت کے کسی معاملے پر مٹی ڈالنے کا یہ طریقہ مستعمل تھا کہ سفارشات مرتب کرنے کے لئے حسب ذائقہ کمیٹی تشکیل دیدی جائے یا پھر کمیشن بنا دیا جائے مگر نئے پاکستان میں عوام کو ٹرک…

Read more

سفارتکاری سیکھیں

ناتجربہ کاری کا عذر اپنی جگہ مگر اتنی سی بات تو کچہری میں مکھیاں مارتا کوئی نکما ترین وکیل یاگائوں کی پنچایت کا سرپنچ بھی بتاسکتا ہے کہ دشمن سے لڑائی ختم کرکے صلح کرنے کا بہترین وقت کب ہوتا ہے ۔اگر آپ کا کسی ہمسائے سے جھگڑا چل رہا ہو اور بات مقدمے بازی…

Read more

یہ تبدیلی کا ٹریلر ہے، پکچر ابھی باقی ہے

ٹیری پراچیت برطانوی مزاح نگار تھے جن کی لکھی ہوئی کتابیں ان کی زندگی میں 37 ختلف زبانوں میں شائع ہوئیں اور 8 روڑ 50 لاکھ کاپیاں فروخت ہوئیں۔ ان سے کسی نے پوچھا، بالعموم کہا جاتا ہے کہ موت اور ٹیکس سے چھٹکارا ممکن نہیں، آپ اس بارے میں کیا کہتے ہیں؟ ٹیری پراچیت…

Read more

مولا جٹ کا کھڑاک کب ہو گا

سابق وزیراعظم نوازشریف نے احتساب عدالت میں پیشی کے موقع پر تمثیلی گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ 70ء کی دہائی میں لوگوں کو فلمیں دیکھنے کا بہت شوق تھا ایک ڈائریکٹر کی فلم بہت ہٹ ہوئی۔ میرے کسی دوست نے اس ڈائریکٹر سے پوچھا فلم کیسی چل رہی ہے؟ اس نے کہا پہلا ہفتہ تو…

Read more