جانے والوں کو کہاں روک سکا ہے کوئی

عمر بھر سنگ زنی کرتے رہے اہل وطن یہ الگ بات کہ دفنائیں گے اعزاز کے ساتھ اہل وطن نے اتنے سنگ سمیٹ لیے ہیں کہ اب کے پس مرگ بھی سنگ زنی جاری ہے۔ یہ کم و بیش سترہ برس ادھر کی بات ہے۔ ابھی وقت نے آمریت کی رعونت پہ خاک نہ ڈالی…

Read more

چندہ اور ڈیم

شیریں فرہاد اک رومانوی داستان ہے۔ بعض کتب میں انہیں ایرانی کہا گیا اور بعض کتب میں شیریں فرہاد کا وطن بلوچستان بتایا گیا ہے۔ شیریں فرہاد کا مزار ایران میں بھی ہے اور بلوچستان میں آواران کے مقام پر بھی شیریں فرہاد کی قبر ہے۔ بہت سی دوسری لوک داستانوں کی طرح شیریں فرہاد…

Read more

وزیر اعظم، وزارت اطلاعات اور نادان دوست

نادان دوست اور دانا دشمن کا اک پرانا قصہ ہے۔ بادشاہ نے اک ملازم رکھا۔ ملازم تھوڑا موقع پرست تھا اس لیے وہ پہلے دو تین بادشاہوں کے ہاں بھی اپنی خدمت پیش کر چکا تھا۔ اوپر سے ملازم ذرا نادان اور منہ پھٹ بھی تھا جو ماضی میں بادشاہ کو بھی کھری کھری سنا…

Read more

شیخ رشید اور ڈھیلی نیکر

اک عورت کسی سیانے حکیم کے پاس گئی ۔ وہ اپنے بچے کی شرارتوں سے بہت پریشان تھی ۔ اس نے حکیم سے عرض کیا "بھائی کوئی نسخہ تجویز کریں اس کی شرارتیں کم ہو جائیں " ۔ سیانے نے بچے کو دیکھا اور اور عورت سے کہا اسے ڈھیلی نیکر پہناؤ ۔ عورت نے…

Read more

سرِ منبر وہ خوابوں کے محل

اگلے وقتوں کی بات ہے۔ گاؤں میں انتہا کی پسماندگی تھی۔ کھانا کسی کسی تو ملتا وہ بھی اک پہر، دو پہر۔ نہ کوئی سکول مدرسہ نہ مکتب پاٹ شالا۔ تیز تھا سر ہر خار۔ ڈاکٹر حکیم دوا دارو بھی مفقود۔ ہر جگہ بھوک ننگ افلاس کا راج تھا۔ ہر روش خاک اڑاتی تھی صبا۔…

Read more

عدل کی زنجیر میں جھنکار

اسلامی تاریخ عدل و انصاف کی بے مثال ولازوال داستانوں سے بھری پڑی ہے۔ آقا ئے دو جہاں حضرت محمد ﷺ نے انصاف کی وہ مثال قائم کی جس میں آپﷺ کی نور نظر خاتون جنت حضرت فاطمہ (رض) کو بھی کوئی استثناء حاصل نہیں تھا۔ انصاف سب کے لیے برابر کیا بدو کیا سردار۔…

Read more

پنجاب کے وزیر اعلٰی کا کھیل سپر اوور تک جا سکتا ہے

بوڑھا شکاری اپنے ساتھیوں، بالکوں کو لے کر شکار پر نکلا۔ شکاری پرانا گھاگ اپنے نشانہ میں طاق تھا۔ تیر تیشے بالے چلتے رہے۔ کچھ جانور شکار ہوئے کچھ گھائل کچھ زخمی ہو کے بھاگ نکلے۔ شکار کے ساتھ ساتھ جنگل کا فاصلہ بھی طے ہوتا رہا۔ چلتے چلتے جنگل کا وسط آگیا لیکن اتنا…

Read more

ووٹ کو عزت دیں

میرے ایک بزرگ نے اپنی عمر کا بیشتر حصہ خلیجی ممالک میں محنت مزدوری کرتے گزارا۔ ان بزرگوار کی جمع پونجی لاہور کے علاقے جوہر ٹاؤن میں اک دس مرلے کا مکان جو انہوں نے اک نادارعورت کو مناسب داموں میں کرایہ پہ دیا ہوا تھا۔ بچیوں کی شادی کا مرحلہ درپیش آیا تو یہ…

Read more

ایون فیلڈ سے اڈیالہ

گاؤں میں چوری چکاری بہت تھی۔ ہر واردات میں تقریباً وہی چور اور وہی طریقہ واردات۔ گاؤن والوں نے بہت نسخے آزمائے لیکن چور کسی طرح پکڑائی نہ دیتا۔ ہر ناکہ ہر پہرہ بے سود۔ کچھ عرصہ بعد گاؤن والوں کو اک نام نہاد معزز پہ شک ہوا۔ جب اسی معزز کے گھر سے مال…

Read more

پاپوش میں لگادی کرن آفتاب کی

بادشاہ سلامت اپنے اک شہر کے حالات کی وجہ سے بہت پریشان تھے۔ اس شہر میں چوری ڈکیتی کسی طرح تھم کر نہ دیتی تھی۔ جو بھی نگران شہرآتا وہ بھی لٹیروں سے مل جاتا۔ جن پہ تکیہ تھا وہی پتے ہوا دینے لگے۔ اس نے کئی والئی شہر بدلے لیکن حالات جوں کے توں…

Read more