یتیم مملکت کے یتیم وزیر اعظم کے نام، ایک یتیم پاکستانی کا خط

عالی مرتبت جناب عمران خان صاحب وزیر اعظم اسلامی جمہوریہ پاکستان آداب! ڈھیروں دعاؤں اور نیک تمناؤں کے ساتھ بارگاہِ ناز میں کچھ معروضات گوش گزار کرنے کی اجازت چاہتا ہوں۔ جناب وزیر اعظم! بطور وزیر اعظم اسلامی جمہوریہ پاکستان قیادت کے جس مقام پر آج آپ کھڑے ہیں، وہاں آپ کو قوم کے ہیرو…

Read more

ہم وہ ٹین کے ڈبے ہیں جو بس شور ہی مچاتے رہ جاتے ہیں

مگر اک عمر۔ ۔ ۔ ہم نے زندگی کو زندگی محسوس کرنے کی طلب میں۔ رائیگاں کر لی ! عشق کی داستان آج گلی گلی پھیلی ہوئی ہے، ہر دوسرا انسان اس بیماری میں مبتلا ہے، کچھ سمجھ دارایسے بھی ہیں جو دوسروں کو دیکھ کے عبرت حاصل کرتے ہیں اور یہ ’دوسرے‘ وہ لوگ…

Read more

تذکرہ ”شہرآشوب” اوچ شریف

سوالاکھ اولیائے کرام کی نگری اوچ شریف برصغیر کی ان تاریخ ساز بستیوں میں سے ایک ہے جہاں اگر ایک طرف سلطنتوں کے عروج وزوال کی داستانیں مرتب ہوتی رہیں تو دوسری طرف تہذیب و ثقافت کے ان گنت نقوش ابھرتے اور مٹتے رہے۔ اسلامی تصوف و شریعت کی شمعیں جو کفروضلالت کے تاریک گوشوں…

Read more

’پرانے پاکستان‘ کی ’متروک‘ یادداشتیں

1991 ء میں جب پہلی بار اوچ شریف کو ٹیلی فون کی سہولت نصیب ہوئی تو پہلے مرحلے میں ہمارا گھر بھی ان دو سو خوش قسمت گھروں میں شامل تھا جس کو ٹیلی فون کا کنکشن ملا، ہمارا ٹیلی فون نمبر 192 تھا، ڈائریکٹ ڈائلنگ کا نظام تھا نہیں سو پہلے ٹیلی فون آپریٹر…

Read more

صحافت کی قبائے دلفریب اوڑھ کر حریمِ لفظ کا تقدس پامال کرنے والے

وطن عزیز میں یوں تو ایوان اقتدار سے لے کر منبر ومحراب تک ہی افراتفری، نارسائی، بدعنوانی اورلوٹ کھسوٹ خودروجڑی بوٹیوں کی طرح اگی ہوئی ہیں، مگر جس قدر صحافت جیسے مقدس اور محنت طلب شعبے میں کالی بھیڑیں دَر آئی ہیں،یہ بجائے خود المناک ہی نہیں بلکہ شرمناک بھی ہے، صحافت کو آزاد جمہوری…

Read more

”پرانے پاکستان” کے ایک بوسیدہ شہری کی ”متروک” وصیت

میرے بچو! ’پرانے پاکستان‘ کا ایک بوسیدہ شہری، جو اداس نسلوں کے تسلسل کی آخری کڑی ہے، عمر رواں کی بے اعتبار سانسوں کی مالا جپتے جپتے جسے کہولت نے آ لیا ہے۔ نئے پاکستان کے قیام پر تمہیں وصیت کرتا ہے۔ یاد رکھنا کہ تم اس ملک کے شہری ہو جس ملک میں علیل…

Read more

جاسوسی ناول نگاری کے تاجدارِ فن مظہر کلیم (ایم اے) جہانِ ادب کو سُونا کر گئے

’’مرنے والے تجھے روئے گا زمانہ برسوں‘‘ 26مئی کو آسمان ادب کا یہ درخشاں ستارہ تین نسلوں پر محیط اپنے لاکھوں قارئین کو سوگوار کر کے دورکہیں افق میں ڈوب گیا میں نے اتنی بڑی تعداد میں ناول اپنی قوت خیال کے زور پر تحریرکئے ہیں کیونکہ جب خیال کو قوت مل جاتی ہے تو…

Read more