دکھاوے کے لیے رکھی چیزیں

وائے تقدیر! کسی دوست کے کام کے سلسلے میں ایک بہت بڑے نجی ادارے کے جدید ترین وسیع و عریض دفتر میں جانا ہوا۔ دفتر کے باہر خاصے کشادہ پارکنگ ایریا کے داخلے پر جلی حروف میں درج تھا "صرف دفتری سٹاف کے لیے"۔ آدھی پارکنگ خالی پڑی ہوئی تھی لیکن سائلین اور وہ لوگ…

Read more

ناؤ پانی کی موت سے ڈرتی ہے

ناؤ کے لیے پانی ضروری ہے وہ لکڑی کی ہو یا کاغذ کی اسے بہنے کے لیے پانی چاہئیے پانی اسے لذتِ سفر کی انتہاؤں تک لے جاتا ہے نئے جزیروں، نئی دنیاؤں کی سیر کراتا ہے ناؤ پانی سے پیار کرتی ہے ناؤ کو تیرتے رہنا اچھا لگتا ہے وہ پانی کے پیٹ پر…

Read more

ہم بچے ہیں

ہم بچے ہیں ہم اسکول جاتے ہیں پارکوں میں اچھلتے کودتے ہیں کھلونوں سے کھیلتے ہیں غباروں میں ہوا بھر کر خوش ہوتے ہیں ہم متحرک فلمیں اور کارٹون دیکھتے ہیں اور چپس اور چاکلیٹس کھا کھا کر بیمار ہوتے رہتے ہیں مگر باز نہیں آتے ہم ضدی ہیں لڑتے ہیں جھگڑتے ہیں پھر ایک…

Read more

خوابوں کا بستہ

 بچپن کی یادوں میں ایک منظر جو اکثر دھیان میں ابھرتا ہے وہ اسکول کے راستے کا ہے۔ ہلکی ہلکی بارش اور ریتیلے راستے میں اتنے زیادہ کینچوے اور مینڈکوں کے چھوٹے چھوٹے اچھلتے کودتے بچے ہیں کہ قدم رکھنے کی جگہ نہیں۔ میں احتیاط سے دیکھ دیکھ کر چل رہا ہوں مبادا کوئی…

Read more

منافع کی معیشت میں خسارے کا آدمی

یوسف حسن صاحب سے میرے بہت قریبی تعلقات نہیں تھے، بس گاہے گاہے کسی ادبی پروگرام میں یا کسی کے ہاں یا کسی دوست کے ساتھ ان سے ملاقات ہو جاتی تھی۔ راولپنڈی میں میرے گھر شاید وہ ایک دو بار ہی آئے ہوں گے۔ لیکن ایک احترام اور محبت کا رشتہ ہمیشہ رہا۔ مجھے…

Read more

کاملہ شمسی: برطانیہ میں ویمن پرائز فار فکشن جیتنے والی پہلی پاکستانی خاتون

برطانیہ میں 2018ء کا ویمن پرائز فار فکشن پاکستانی مصنفہ کاملہ شمسی نے جیت لیا ہے۔ تیس ہزار پاؤنڈ کی انعامی رقم کا یہ ایوارڈ جیتنے والی وہ پہلی پاکستانی نژاد خاتون ہیں۔ کاملہ کو یہ ایوارڈ ان کے 2017ء میں شائع ہونے والے ناول ہوم فائر پر دیا گیا ہے۔ ہوم فائر کاملہ کا…

Read more

پھول کالے، تتلیوں کے پر سلیٹی ہو چکے ہیں

آج ماحولیات کا عالمی دن منایا جا رہا ہے۔ اقوامِ متحدہ کے زیرِ اہتمام 1974ء سے دنیا بھر میں یہ دن ہر سال 5 جون کو منایا جاتا ہے۔ اس دن کا مقصد ماحولیاتی آلودگی کے حوالے سے عام لوگوں میں شعور اجاگر کرنا اور بڑھتی ہوئی ماحولیاتی آلودگی سے پیدا ہونے والے مسائل، گلوبل…

Read more

جنگجُو کرد عورتوں کا گیت

ہم قطار در قطار پہاڑوں اور جنگلوں سے گزرتی ہیں اور ہوا کی طرح مشکل راستوں پر چلتی ہیں ہمارے قدموں کی دھمک سے موت رقص کرنے لگتی ہے اور ہماری بندوقوں کا رخ دشمن کی طرف ہو جاتا ہے ہم رات کی طرح دشمن علاقوں میں پھیل جاتی ہیں اور ہماری صبح مورچوں میں…

Read more

آخری لفظ کے بے کار ہونے تک لکھتے رہو!

کبھی کبھی یوں لگتا ہے جیسے دکھ کے مقابلے میں خوشی ناقابلِ حصول ہے یہ سچ ہے کہ چاند اور ستارے اب روشنی کی امید نہیں، بلکہ شب کی علامتیں ہیں جو کثرتِ استعمال سے کلیشے ہو چکی ہیں وقت کے تاریک سمندر میں سورج کے ابھرنے اور ڈوبنے سے بھی اب کوئی فرق نہیں…

Read more

ندیاں شاعروں کو جانتی ہیں

بعض احباب فیس بک اِن باکس میں بڑی دلچسپ باتیں اور سوالات پوچھتے رہتے ہیں۔ بالخصوص خواتین۔ کچھ تو باتوں باتوں میں ذاتی معلومات پر مبنی پورا انٹرویو لینا شروع کر دیتی ہیں۔ ادبی زندگی میں تو مَیں انٹرویو کم ہی دیتا ہوں لیکن اس طرح کے غیر رسمی ہلکے پھلکے پُر تجسس سوالوں کا…

Read more