دس روپے کی چائے

یہ ہسپتال کی کینٹین تھی جس میں مریضوں کے ساتھ آئے ہوئے لوگ بھوک مٹانے کی خاطر جوق در جوق آرہے تھے۔ کینٹین کے مالکان ہشاش بشاش نظر آرہے تھے کیونکہ جتنے مریضوں کی تعداد بڑھتی ہے ان کے وارے نیارے ہوجاتے ہیں اور یہ کوئی عام ہسپتال نہ تھا بلکہ صوبے کا سب سے…

Read more