روشن خیالوں کی اقسام

انسان کو با وقار جنس بنانے والے ہر مہذب رویے اور معتبر نظام کی بھد اڑانا ہمارے ''فرائض منصبی‘‘ میں شامل ہے۔ جیسے وسیع القلبی، وسیع النظری، معقولیت، رواداری، برداشت، احترام انسانیت، جمہوریت، لبرل ازم اور سیکولرازم وغیرہ۔ روشن خیالی بھی ایسا ہی ایک مہذب مگر مظلوم رویہ ہے، جسے ہم لوگوں کی بے کراں…

Read more

حکیم حلویؔ کا محبت نامہ

گزشتہ کالم میں ہم نے علامہ حکیم حلویؔنامرادآبادی کولاحق لاتعدادعوارض میں سے فقط ان کے دانشورانہ چال چلن کاتذکرہ کیاتھا۔ان کی عینک سے فکرِاقبالؔ کاجائزہ بھی لیاگیا۔اس پرقبلہ حلویؔ نے ازراہِ کرم ہمیں محبت نامہ بھیجاہے۔ عمیق مشاہدے اور وسیع مطالعہ کی چغلی کھا تا‘فہم و دانش میں گندھاان کا فکر انگیز مکتوب ملاحظہ فرمائیے…

Read more

حکیم الیونین کونسل حلوی نے اقبال کو ایڈٹ کر دیا

ہشت پہلو شخصیت علامہ حکیم حلویؔ نامراد آبادی اپنا ثانی نہیں رکھتے۔ چھوٹے بڑے چار دیہات پر مشتمل ہماری پوری یونین کونسل میں ان جیسا ماہر طب، باکمال شاعر، زود فہم دانشور اور نامور محقق پیدا نہیں ہوا۔ آپ نے میدانِ علم و ادب میں اپنا جو مقام مقرر کر رکھا ہے، اسے اندیشۂ نقصِ…

Read more

تعلیمِ بالغاں کا کلاس روم

ماسٹر صاحب: (کلاس روم میں آکر غصے سے) یہ سب کیا ہے؟ ارے کم بختو یہ کیا حالت بنا رکھی ہے، کمرے کی تم نے، ابے کیوں ہر چیز توڑ کے رکھ دی؟ خانو خاکسار: پریشان نہ ہوں ماسٹر جی! یہ ہم نے ذراسا احتجاج کیا ہے (کلاس میں قہقہہ گونجتا ہے) ماسٹر صاحب: ارے…

Read more

محیر العقول مفروضے

اکیسویں صدی کے ڈیجیٹل عہد میں بھی ما فوق الفطرت، مافوق الفہم اور زمینی حقائق سے کئی نوری سال دور مفروضے ہم گھڑتے ہیں۔ یہی نہیں بلکہ اپنے مضحکہ خیز مفروضہ جات کو حقائق اولیٰ کا درجہ دیتے ہوئے یہ بھی چاہتے ہیں کہ آنکھوں اور کانوں والے ان پر اپنی مہر تصدیق ثبت کر…

Read more

ریاست ڈسٹرکشن کلب نہیں ہوتی!

دکھانے والے کی مرضی ہے‘ چاہے تواپنے گستاخ بندوںکومریخ پرپہنچاکرانہیں وہاںکی پتھریلی چٹانوں کی حقیقت سے روشناس کرا دے۔ دکھانے والے نے دکھایاتونہیں ‘مگراس قلمدارنے سنا ہے کہ برطانیہ میں ایک ہائیڈپارک بھی ہواکرتاہے ۔جو چاہے‘ وہاں جا کرزبان سے اپنے من کی بھڑاس نکال سکتاہے۔ دکھایاتوان گناہ گارآنکھوں کو امریکہ کا ڈسٹرکشن کلب بھی…

Read more

بازخانی ضابطۂ حیات میں ہماری دلچسپی

پڑھنے والے بھی بادشاہ لوگ ہیں۔ گزشتہ کالم کے آغاز میں عرض کیا گیا تھا کہ ایک کالم جناب بی کے ماچھی کے افکار و نظریات اور حیات و خدمات کا احاطہ کرنے کا متحمل نہیں ہو سکتا، نیز ان کے اوصافِ حمیدہ کے تفصیلی تعارف کے لیے یہ فورم بھی مناسب نہیں کہ اخبار…

Read more

بازخانی طرزِحیات:ایک جائزہ

جناب بی کے ماچھی کے افکارونظریات اورحیات وخدمات کااحاطہ ایک کالم میں ممکن نہیں‘سوہم ان کے ایک اجمالی سے جائزے کی روشنی میں اپنے مطلب پرآتے ہیں۔ یادش بخیر! ہمارے بچپن کے دور میں بازخان ماچھی نے کئی برس تک ہمارے ڈیرے پر ملازم کی حیثیت سے اپنی گراں قدر خدمات انجا م دیں۔ مویشیوں…

Read more

حشر گلفشانی کا بہرہ پن

حشر گلفشانی: (ٹی وی کے سامنے بیٹھ کر گھٹنوں پر طبلہ بجاتے گنگنا رہا ہے) لو، تبدیلی آئی ہے، تبدیلی... سلمیٰ: (کچن سے) ٹھنڈا کرکے کھائیں تبدیلی کے چیمپئن جی۔ حشر گلفشانی: ہائیں! کس نے شیمپئن پی؟ ارے یہ کیسا غیر پارلیمانی الزام لگا دیا تم نے بہو۔ سلمیٰ: (ٹی وی لائونج میں آ کر)…

Read more

مندرہ بھون ٹریک کی المیہ داستان

سپریم کورٹ میں ریلوے حکام کی ایک مرتبہ پھر سرزنش ہوئی ہے۔ سینئر کالم نگار ملک فدا الرحمن کی درخواست کی سماعت کے دوران چیف جسٹس میاں ثاقب نثار نے قرار دیا ہے کہ ریلوے کی سرکاری اراضی ریاست کی ملکیت ہے‘ جسے بیچنے کامحکمہ ریلوے کے پاس کوئی اختیار نہیں۔ عدالت میں ریلوے اراضی…

Read more