عوام کے سیاسی شعور میں بہتری جمہوری ارتقا کا اشارہ ہے

عوام کے سیاسی شعور کی جانچ ایک مثال سے شروع کرتے ہیں۔ انور کمال کا گھرانہ، اُن کی بیگم اور تین بچوں پر مشتمل تھا۔ وہ شہر کے خوشحال علاقے میں کرائے کے مکان میں رہتے تھے۔ بڑا بیٹا اکائونٹس کی تعلیم مکمل کرنے کے بعد برسرِ روزگار تھا۔ شادی کے بعد بیوی اور ایک…

Read more

آبی معیشت، مشکل فیصلے کون کرے گا

گزشتہ سردیوں کے دوران شمالی علاقوں میں برف باری معمول سے کم رہی۔ پنجاب اور سندھ کے میدانوں میں، مئی کے اوائل سے ہی شدید گرمی شروع ہوئی اور بارش بھی کم برسی۔ دریائوں میں پانی کی آمد معمول سے کم ہونے پر منگلا اور تربیلا میں پانی کی سطح نیچے آگئی۔ نہروں میں پانی…

Read more

بنگلہ دیش آگے کیسے نکلا؟

میرے کئی دوست حیرت سے پوچھتے ہیں کہ بنگلہ دیش، ملبوسات(گارمنٹس) کی برآمدات میں ہم سے آگے کیسے نکلا۔ اُن کی سوچ کے پیچھے یہ گمان ہے کہ خام مال میسر ہو تو اشیاء برآمد کرنا سہل ہو جاتا ہے۔ اُنہیں علم ہے کہ بنگلہ دیش میں کپاس پیدا نہیں ہوتی۔ وہ یہ بھی جانتے…

Read more

تریپن روپے کی بچت

اسٹیٹ بینک آف پاکستان سال میں کئی بار، عوامی اطلاع کے لئے، ملکی معیشت کی جائزہ رپورٹ جاری کرتا ہے۔ چند ماہ پیشتر اُس کی رپورٹ میں پاکستان کے آبی مسائل کی طرف توجہ دلائی گئی۔ تجویز کیا گیا کہ پانی کی قیمت بڑھانے کی ضرورت ہے۔ معاشی جائزے میں پانی کی قیمت میں اضافے…

Read more

شوکت عزیز، بنکاری اور برآمدات

وزیرِ اعظم کی میٹنگ کا ماحول عمومی طور پر تنائو کا شکار رہتا ہے۔ اِس تنائو میں مزید شدت اُس وقت آتی ہے جب کسی وزارت کو اہم مسئلوں پر وزیرِ اعظم سے فیصلے درکار ہوں۔ وزیرِ اعظم کی میٹنگ میں خزانہ اور منصوبہ بندی کے علاوہ دُوسری متعلقہ وزارتوں کے وزراء اور سیکرٹریوں کو…

Read more

ہماری برآمدات کیوں نہ بڑھ سکیں

شاہد خاقان عباسی کی کابینہ نے آخری دنوں میں برآمدی مراعات کے جاری پروگرام کی مدت میں اضافہ کر دیا۔ حالات کے مطابق شاید یہ ضروری تھا مگر خوشی نہیں ہوئی۔ کب تک عارضی امداد کا سہارا درکار رہے گا۔ یہ مسئلہ ایک طویل مدتی لائحہ عمل کا متقاضی ہے۔ پاکستان کی برآمدات کے فروغ…

Read more

ہم پیچھے کیوں رہ گئے؟

گزشتہ کالم میں چار ممالک کی مثال دی تھی، جو ایشین ٹائیگرز کہلائے۔ اُن وجوہات کا بھی ذکر ہوا جن کی بناء پر ہم ایشین ٹائیگرز کا راستہ نہیں اپنا سکے۔ سرد جنگ کے زمانے میں، اِن چاروں ملکوں میں یا تو فوج حکمران رہی یا امریکی نگرانی میں جمہوریت کو ایک مخصوص دائرے تک…

Read more

ایشیا کے ٹائیگرز اور پاکستان

خلوصِ نیت سے سمجھتا ہوں کہ ہر پاکستانی کا دل، ملکی ترقی کے لئے دھڑکتا ہے۔ ہم چاہے کسی شعبے یا ادارے سے تعلق رکھتے ہوں، وطن کی محبت سے سرشار ہیں۔ چاہتے ہیں کہ پاکستان جلد از جلد معاشی اور سماجی ترقی کی منازل طے کرے۔ ہم دوسری قوموں کو ہم پلہ سمجھتے ہیں،…

Read more

تاش کی گڈی میں جوکر

جون 2012ء کی ایک گرم سہ پہر تھی۔ ایوان صدر سے فون موصول ہوا۔ خلاف توقع، دوسری طرف احمد مختار بول رہے تھے۔ اُنہوں نے بتایا کہ وہ صدر پاکستان کے کمرے سے بات کر رہے ہیں۔ میرا ماتھا ٹھنکا۔ چند دن پہلے احمد مختار کووزارتِ دفاع سے ہٹا کر، پانی اور بجلی کا قلمدان…

Read more

گھوڑا تجزیہ سن کر نہیں دوڑتا

گورنمنٹ کالج لاہور 1970ء کی دہائی میں روشن خیال تعلیمی ادارہ تھا۔ خوف کی فضا سے آزاد، اُستاد اور شاگرد کھل کر اظہار خیال کرتے۔ ایم اے کے دوران، حامد یامین ڈار ہمیں مائیکرو اکنامکس پڑھاتے تھے۔ بہت روشن دماغ اُستاد تھے۔ کئی سال امریکہ میں رہے۔ سیاحت کا شوق تھا۔ اقتصادیات کی مشکل گتھیوں…

Read more