مستقبل کا ایک امتحانی پرچہ

مردان کے تحصیل کاٹلنگ کے ایک پرائمری سکول کی ویڈیو اس وقت سوشل میڈیا پر گردش میں ہے۔ اس ویڈیو میں سکول کے بچے تقریب انعامات کے پروگرام میں ملک کی حکمران سیاسی جماعت، تحریک انصاف کا پارٹی ترانہ گا رہے ہیں۔ خبر یہ ہے کہ کھوئی برمول کے سرکاری سکول انتظامیہ نے اس تقریب…

Read more

غزالاں تم تو واقف ہو، نہ جنوں رہا نہ پری رہی

یہ ہسپتال کا ویٹنگ ایریا تھا۔ میری بالکل ساتھ والی کرسی پر ایک نوجوان بیٹھا تھا۔ اس کے بعد والی کرسی پر ان کی قدرے زیادہ بوڑھی والدہ بیٹھی تھیں۔ ان کے بعد ایک نوجوان لڑکی بیٹھی ہوئی تھی۔ گفتگو سے اندازہ ہوا کہ لڑکی اسلام آباد میں ہی رہتی ہیں۔ سی ایس ایس کا امتحان پاس کر چکی ہیں اور سائیکلوجیکل ٹیسٹ کی منتظر ہیں۔ لڑکا والدہ کو غالباً راولپنڈی یا کم از کم گوجر خان سے لے کر آیا ہے۔ ابھی ان کا نمبر نہیں آیا تو انتظار میں ہیں اور آپس میں گفتگو کر رہے ہیں۔

لڑکا لڑکی سے پوچھتا ہے، آپ کا سی ایس ایس کرنے کے بعد کس گروپ جانے کا ارادہ ہے؟
لڑکی: میں پولیس میں جانا چاہتی ہوں۔

لڑکا، : کیوں؟ فارن سروس اچھا نہیں ہے؟
لڑکی: بس میرا پیشن (passion ) ہے پولیس میں جانا۔

Read more

قہوے کا فلسفہ، سیکولرازم کا کفر اور دانش کا جنازہ

بہت سے عام دنوں کی طرح یہ بھی ایک عام دن تھا۔ کچھ دوست احباب چائے کی محفل پر جمع ہوئے اور ملکی سیاست پر بات شروع ہوئی۔ بات بڑھتے بڑھتے سیاسیات سے فلسفے کی حدود میں داخل ہو گئی۔ ایسے میں ایک معزز دوست نے ایک باریک نکتہ بیان کیا۔ فرمانے لگے ’ سیکولرازم…

Read more

پنجابی بزدل نہیں اور پٹھان چور نہیں

بھائی صاحب۔ عرض یہ ہے کہ لفظ پنجابی، بلوچ، سندھی، پٹھان اور اس قبیل کے دیگر الفاظ کو ہمارے ہاں بہت سطحی انداز میں مجموعی تناظر میں غلط اور ایک دوسرے سے کم تر اور برتر کے معنوں میں برتا جاتا ہے اس لئے چند باتوں کی تفصیل جان لینا ضروری ہے۔ آپ کو شاید…

Read more

نانا نفرت نہیں کرتے تھے!

 نانا جی کسی اور ہی دنیا کے باسی تھے۔ شاید اس دنیا کی خوبصورتی بیان کرنے کے لئے معروف استعاروں سے کچھ زیادہ کی ضرورت ہے۔ خوبصورت، حسین ، تابناک، خواب ناک اور رنگوں سے مزین جیسے استعارے اپنے مفاہیم میں تو اپنے قد کے برابر ہیں مگر نانا کی دنیا میں بونے ہیں۔ معلوم…

Read more

بانکے کبوتر، کولھو کا بیل اور نیل کنٹھ

سولہویں صدی کا ابتدائی دور ہے۔ یورپ نشاة ثانیہ کے کشمکش سے نبرد آزما ہے۔ پاپائیت اپنی بقا کی آخری سانسوں پر ہے۔ لیونارڈو داونچی مونا لیزا کی مسکراہٹ تخلیق کر چکا ہے۔ ’دی لاسٹ سوپر‘ میں یسوع مسیح کی آخری ضیافت کی منظر کشی ہو چکی ہے۔ جس میں یسوع مسیح اپنے حواریوں سے…

Read more

آسٹریلیا کا ٹیگور اور ایٹمی جنگ

کریم آباد میں رکنے کا ارادہ نہیں تھا مگر رک گئے۔ ہنزہ میں سیاحوں کے غول اترے ہوئے تھے۔ ہوٹلوں میں جگہ نہیں تھی مگر نظیم اللہ بیگ موجود تھا۔ نظیم موجود ہو تو ہنزہ میں چھت ڈھونڈنا اپنے گھر جانے جیسا ہے۔ دور اندر گلیوں میں ایک سنسان سا مکان تھا جسے ابھی ہوٹل…

Read more

رنگوں کی کمپلین ہے صاب

بٹورا گلیشیئر کے دھانے پر دوستوں کے منتظر وقار ملک، رات کے گھپ اندھیرے میں بتاتے رہے کہ بٹورا جھیل کیسے دکھتی ہے؟ غالباً ہاتھ سے اشارے بھی کیے ہوں گے جو میں نہیں دیکھ سکا۔ اب ایسا اندھیر بھی نہیں مچا تھا کہ موبائل کی روشنی میں ایک دوسرے کو دیکھ نہ پاتے مگر…

Read more

ایک زرداری سب پہ بھاری

عرض کیا کہ کھیل اب بھی زرداری صاحب کے ہاتھ میں ہے تو احباب نے بندوں کی گنتی شروع کر دی۔ مسئلہ حکومت بنانے کا نہیں ہے بلکہ حکومت چلانے کا ہے۔ بظاہر پاکستان پیپلز پارٹی نے اپوزیشن میں بیٹھنے کا اعلان کر دیا ہے۔ بظاہر یہ لگ رہا تھا کہ عمران خان سادہ اکثریت…

Read more

افسانے سے زیادہ حیران کن سچائی

یہ ایک پیچیدہ کہانی تھی اور ایسے ہی پیچیدہ ہمارے خواب ہیں، ٹکڑوں میں دیکھے ہوئے۔ عشروں ، جن کی آبیاری کرتے رہے۔ اس روشن کل کے خواب، جس کا سورج طلوع ہو کر بھی گرہن کے مستقل ہالے میں جھکڑا رہتا ہے۔ لاطینی امریکہ کے تخلیق کار کہانی بننے کے فن میں اتنے ہی…

Read more