انڈین آرمی چیف بپن راوت : پاکستان کو انڈیا سے دوستی کے لیے سیکولر ہونا پڑے گا

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

انڈین آرمی چیف

Getty Images
انڈین آرمی چیف بپن راوت

انڈیا کی فوج کے سربراہ بپن راوت نے کہا ہے کہہ اگر پاکستان کو انڈیا سے تعلقات کو بہتر بنانا ہے تو اسے ایک اسلامی ملک کی جگہ ایک سیکولر ملک ہونا پڑے گا۔

انڈین ذرائع ابلاغ پر نشر ہونے والے انڈین آرمی چیف کے انٹرویو میں انھوں نے کہا کہ ‘پاکستان کو اپنی اندرونی حالت دیکھنی ہو گی، پاکستان نے اپنی ریاست کو اسلامی ریاست بنا لیا ہے۔’

وزیر اعظم عمران خان کی طرف انڈیا سے دوستی کے لیے ایک قدم کے مقابلے میں دو قدم بڑھانے کا بظاہر جواب دیتے ہوئے بپن راوت نے کہا کہ ‘ہم تو کئی مرتبہ قدم بڑھا چکے ہیں۔’

بپن راوت اپنے انٹرویو میں کبھی انگریزی اور کبھی ہندی کا سہارا لیتے رہے۔ بپن راوت نے انگریزی میں کہا کہ ‘اگر پاکستان انڈیا کے ساتھ رہنا چاہتا ہے تو اسے ایک سیکولر ریاست کے طور پر ڈیویلپ کرنا ہو گا۔’

نوجوت سنگھ سدھو

Getty Images
نوجوت سنگھ سدھو راہداری کا سنگِ بنیاد رکھنے کی تقریب میں موجود تھے

انھوں نے کہا کہ انڈیا ایک سیکولر ریاست ہے۔ ‘ہم دونوں کو ایک ساتھ رہنے کے لیے ہم دونوں کو سیکولر بننا ہو گا۔ اگر وہ ہماری طرح سیکولر ہونا پسند کریں تو پھر میں سمجھتا ہوں کہ ہم ایک ساتھ رہ سکتے ہیں۔’

انھوں نے مزید کہا کہ اعتماد پیدا کرنے کے لیے آپ صرف بیانات ہی نہیں دیتے۔

‘آپ کو کچھ کر کے دکھانا ہو گا، آپ کا قدم مثبت انداز میں سامنے آنا چاہیے۔’ انھوں نے کہا کہ انڈیا دیکھے گا کہ کیا کارروائی کی گئی ہے ‘ورنہ ہمارے دیش کی پالیسی بالکل واضح ہے کہ دہشت گردی اور بات چیت ساتھ ساتھ نہیں چل سکتے۔’

یاد رہے کہ کرتار پورراہداری کا سنگ بنیاد رکھنے کی تقریب میں وزیر اعظم عمران خان نے دو دن قبل ہی ایک مرتبہ پھر یہ کہا تھا کہ اگر انڈیا پاکستان سے تعلقات بہتر کرنے کے لیے ایک قدم بڑھائے گا تو پاکستان دو قدم بڑھانے کو تیار ہے۔

image_pdfimage_print
Comments - User is solely responsible for his/her words

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

اگر آپ یہ سمجھتے ہیں کہ ”ہم سب“ ایک مثبت سوچ کو فروغ دے کر ایک بہتر پاکستان کی تشکیل میں مدد دے رہا ہے تو ہمارا ساتھ دیں۔ سپورٹ کے لئے اس لنک پر کلک کریں

بی بی سی

بی بی سی اور 'ہم سب' کے درمیان باہمی اشتراک کے معاہدے کے تحت بی بی سی کے مضامین 'ہم سب' پر شائع کیے جاتے ہیں۔

british-broadcasting-corp has 7569 posts and counting.See all posts by british-broadcasting-corp