آسٹریلیا میں کینگروؤں کو برفانی میدانوں میں اچھلتے کودتے دیکھے جانے کے نایاب مناظر

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

آسٹریلیا میں ایک ایسی فوٹیج سامنے آئی ہے جس میں ایک برفانی میدان میں کینگرؤوں کے غول کے غول چھلانگیں لگاتے ہوئے برف کا مزا لے رہے ہیں۔

ملک کے جنوب مشرقی صوبے میں سخت طوفانی ہواؤں اور اور یخ بستہ موسمِ سرما کی وجہ سے اس علاقے میں کئی برسوں کے بعد برف ہوئی ہے۔

ٹوئٹر کے ایک صارف سٹیون گرینفیل جب نیو ساؤتھ ویلز کے ایک علاقے سے بروز اتوار کار چلاتے ہوئے گزر رہے تھے تو انھوں نے کینگروؤں کو ایک برفانی میدان میں چھلانگیں لگاتے دیکھا تھا۔ انھوں نے اس منظر کو اپنے موبائل فون کے کیمرے میں محفوظ کر لیا تھا۔

https://www.facebook.com/bbcurdu/videos/349032802713533/

فون کے کیمرے میں محفوظ اس منظر کو ٹوئٹر پر پوسٹ کرتے ہوئے سٹیون نے لکھا کہ ’آپ آسٹریلیا میں آئے دن ایسا منظر نہیں دیکھتے ہیں۔ برف پوش میدانوں میں کینگرو۔‘

اس کے جواب میں ایک اور صارف نے ٹوئٹر پر ایک ایسی تصویر پوسٹ کی جس میں کینگرو ایک گولف کورس میں اچھلتے ہوئے نظر آرہے ہیں۔

http://twitter.com/matt_laing/status/1160934097167896576


ماہرینِ موسمیات کہتے ہیں کہ حالیہ تاریخ کا یہ ایک ٹھنڈا ترین موسمِ سرما ہے جو آسٹریلیا کے اس خطے میں آیا ہے۔

دارالحکومت کینبرا کے مقامی میڈیا نے خبریں دیں ہیں کہ پہلی مرتبہ آسٹریلیا کے اپنے انداز کے فٹ بال کا ایک میچ برفانی گراؤنڈ میں کھیلا گیا۔

کینگرو برف آسٹریلیا

Getty Images
آسٹریلیا کے دارالحکومت کینبرا میں برف باری کے دوران فٹ بال میچ کھیلا گیا۔

سڈنی کے اطراف میں برف گرنے کی وجہ سے سڑکیں بند ہو گئی تھیں۔

انتہائی ٹھنڈے موسم کی وجہ سے کئی پروازیں بھی منسوخ ہوئی اور ملک کے جنوب میں کوئی دس ہزار گھروں کی بجلی بھی منقطع ہوئی۔

آسٹریلیا کو گزشتہ کئی برسوں میں کئی مرتبہ انتہائی موسموں کا سامنا کرنا پڑا ہے جن کی وجہ سے سیلاب، جنگلوں میں آگ، اور سمندری طوفان آئے ہیں۔

اس ملک کا کافی سارا علاقہ خشک سالی کا بھی شکار چلا آ رہا ہے جس کے نتیجے میں زراعت اور دیہی زندگی پر بہت برا اثر پڑا ہے۔

Comments - User is solely responsible for his/her words

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

بی بی سی

بی بی سی اور 'ہم سب' کے درمیان باہمی اشتراک کے معاہدے کے تحت بی بی سی کے مضامین 'ہم سب' پر شائع کیے جاتے ہیں۔

british-broadcasting-corp has 10720 posts and counting.See all posts by british-broadcasting-corp