نئی تحقیق سے پتا چلا کہ مہنگی کاروں والے برے ڈرائیور ہوتے ہیں!

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

کار

Getty Images

یہ صرف آپ کے دماغ میں ہی نہیں ہے کہ مہنگی کاروں کے ڈرائیور سڑک پر زیادہ برے طریقے سے گاڑی چلاتے ہیں۔

ایک امریکی تحقیق کے مطابق کار جتنی مہنگی ہو گی، اتنے ہی امکانات زیادہ ہیں کہ ڈرائیور سڑک پار کرنے والوں کے لیے نہیں رکے گا۔

جرنل آف ٹرانسپورٹ اینڈ ہیلتھ میں یونیورسٹی آف نیواڈا کے تحقیق کار لکھتے ہیں کہ ہو سکتا ہے کہ وہ ڈرائیور ’سڑک استعمال کرنے والوں پر برتری کا احساس‘ محسوس کرتے ہوں اور دوسرے کے لیے رکنے کی ضرورت نہ محسوس کرتے ہوں۔

وہ کہتے ہیں کہ اس کے برعکس جو ڈرائیور کم چکمدار کاریں چلاتے ہیں وہ پیدل چلنے والوں کا احساس زیادہ کرتے ہیں۔

اسی حوالے سے مزید پڑھیے

ٹریفک رولز کی خلاف ورزی پر کتنا جرمانہ ہو سکتا ہے؟

گاڑیوں سے جذباتی محبت میں مبتلا جرمن قوم

ہائی سٹیٹس کا مسئلہ

تحقیق کے دوران دو مردوں (ایک سفید فام اور ایک سیاہ فام) اور دو عورتوں (ایک سفید فام اور ایک سیاہ فام) نے لاس ویگاس میں سڑکوں کو پار کیا۔

انھوں نے شہر کے ایک پوش اور ایک متوسط علاقے میں زیبرا کراسنگ استعمال کی۔ ان کے سڑک کراس کرنے کے عمل کو ویڈیو پر ریکارڈ کیا گیا اور کاروں کی قیمت کا تجزیہ کیا گیا۔

تحقیق کاروں کے مطابق جوں جوں کاروں کی قیمت 1000 ڈالر بڑھتی گئی ویسے ہی ڈرائیوروں کے پیدل چلنے والوں کے لیے رکنے والوں کے امکانات تین تین فیصد کم ہوتے گئے۔

یونیورسٹی آف نیواڈا (لاس ویگاس) کی ریسرچر اور پبلک ہیلتھ پروفیسر کرٹنی کوفیناور کہتی ہیں کہ نتائج پہلے کی گئی تحقیقات سے مطابقت رکھتے ہیں جن کے مطابق اونچے سٹیٹس والی کاریں پیدل سڑک پار کرنے والوں کے لیے نہیں رکتیں۔

عالمی ادارۂ صحت کے مطابق ہر سال ٹریفک کے حادثات میں ساڑھے بارہ لاکھ کے قریب افراد ہلاک ہوتے ہیں۔ ان میں سے پانچویں حصے سے زیادہ پیدل چلنے والے ہوتے ہیں۔

’کوئی ایک شخص یہ نہیں کہہ سکتا کہ وہ سڑک کا مالک ہے، پیدل چلنے والے اور سائکلسٹوں کا بھی ان مشترکہ جگہوں پر اتنا ہی حق ہے اور وہ احترام کے مستحق ہیں۔‘

اگرچہ سائنس نے مجموعی طور پر چمکدار کاروں اور بری ڈرائیونگ کے درمیان تعلق کی تصدیق کی ہے، لیکن دوسری تحقیق امیر ڈرائیوروں کے مختلف طبقوں کی طرف اشارہ کرتی ہیں۔

مرسڈیز کون چلاتا ہے؟

کار

Getty Images

دسمبر میں انٹرنیشنل جنرل آف سائیکولوجی میں شائع ہونے والی فن لینڈ کی ایک تحقیق کے مطابق صرف برے لوگ ہی مرسڈیز نہیں چلاتے بلکہ ناپسندیدہ لوگوں کے ساتھ ساتھ باضمیر لوگ بھی ہائی سٹیٹس کاریں چلاتے ہیں۔

اور یہ اس لیے ہے کہ وہ جو کار چلاتے ہیں اس کے ساتھ اچھا معیار منسلک رکھتے ہیں اور چاہتے ہیں کہ وہ اچھے معیار کے ڈرائیور بھی نظر آئیں۔

یونیورسٹی آف ہیلسنکی کے پروفیسر آف سوشل سائیکالوجی جان ایرک لونکوئسٹ نے اس سوال کو امریکی تحقیق کاروں کی نسبت ایک مختلف زاویے سے دیکھا ہے۔

انھوں نے اس بات پر تحقیق کی کہ کیا لاپرواہ ڈرائیور اپنی شخصیت میں مخصوص خصوصیات کی وجہ سے ہائی سٹیٹس کاروں کو ترجیح دیتے ہیں یا کہ اپنی جیب میں پیسوں کی وجہ سے۔

اس تحقیق میں فن لینڈ میں 1892 کار مالکان پر کی جانے والی رائے شماری کا تجزیہ کیا گیا جس میں ان کی گاڑی، استعمال کی عادات اور شخصیت کے مختلف پہلوؤں کا جائزہ لیا گیا۔

کاریں

Getty Images

گاڑیاں آپ کے متعلق کیا کہتی ہیں

پروفیسر لونکوئسٹ کہتے ہیں کہ جن کی شخصیت زیادہ ناپسندیدہ ہوتی ہے ان کا رجحان ہائی سٹیٹس کاروں کی طرف زیادہ ہوتا ہے۔ یہ وہ لوگ ہوتے ہیں جو اپنے آپ کو اکثر دوسروں سے برتر سمجھتے ہیں اور ان کی یہ کوشش ہوتی ہیں کہ اس کا احساس دوسروں کو بھی دلائیں۔

تاہم ان کے مطابق باضمیر لوگ بھی مہنگی کاریں استعمال کرتے ہیں۔

’اس کو شاید ان کی اعلیٰ معیار کو دی جانے والی اہمیت سے سمجھا جا سکتا ہے۔ ہر ماڈل کی کار کا ایک مخصوص تصور ہوتا ہے، اور ایک قابلِ اعتبار کار چلا کر وہ یہ پیغام دے رہے ہوتے ہیں کہ وہ خود بھی قابلِ اعتبار ہیں۔‘

وہ کہتے ہیں کہ اس لیے بری ڈرائیونگ اور چمکدار گاڑیوں کے درمیان کڑی شاید دولت نہیں ہے بلکہ متکبر شخصیت ہے۔

جو بھی ہو، جب آپ اگلی مرتبہ سڑک پار کر رہے ہوں تو اس بات کو یقینی بنائیں کہ سڑک پر پاؤں رکھنے سے پہلے آپ نے احتیاط سے ادھر ادھر دیکھ لیا ہے اور اس ایس یو وی پر تو خاص نظر رکھیں جو آپ کی طرف آ رہی ہے۔

Comments - User is solely responsible for his/her words

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

بی بی سی

بی بی سی اور 'ہم سب' کے درمیان باہمی اشتراک کے معاہدے کے تحت بی بی سی کے مضامین 'ہم سب' پر شائع کیے جاتے ہیں۔

british-broadcasting-corp has 19338 posts and counting.See all posts by british-broadcasting-corp