EnglishUrduHindiFrenchGermanArabicPersianChinese (Simplified)Chinese (Traditional)TurkishRussianSpanishPunjabiBengaliSinhalaAzerbaijaniDutchGreekIndonesianItalianJapaneseKoreanNepaliTajikTamilUzbek

شوبز ڈائری: اداکار کبیر بیدی کی کتاب میں پروین بابی کا ذکر، سلمان نے شاہ رُخ کے لیے فلم چھوڑی اور کرینہ کپور کے پسند کے کھانے

نصرت جہاں - بی بی سی اردو ڈاٹ کام، لندن

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

‘پروین بابی کے ساتھ میری محبت میں شدت تھی لیکن یہ رشتہ انتہائی غیر مستحکم اور جذباتی تھا۔ میں نے اسے ذہنی بیماری کے سبب تکلیف سے گزرتا دیکھا۔‘

یہ الفاظ اداکار کبیر بیدی کے ہیں جنھوں نے اپنی کتاب ‘سٹوریز آئی مسٹ ٹیل‘ میں پروین بابی کے بارے میں تفصیل سے لکھے ہیں۔ یہ کہا جاتا ہے کہ 70 اور 80 کی دہائیوں میں انڈین فلم انڈسٹری پر راج کرنے والی پروین بابی نے کبیر بیدی کی محبت میں اپنے شاندار کریئر کو چھوڑ دیا تھا۔

کبیر کہتے ہیں کہ ’شاید ان (پروین بابی) کے ذہنی مسائل کا تعلق ان کے بچپن سے تھا کیونکہ انھیں اپنے گھر کے اردگرد عمارتوں میں روحیں نظر آتی تھیں۔ ان عمارتوں کا تعلق پروین بابی کے خاندان کی تاریخ سے تھا جو پشتونوں کے بابی قبیلے سے تعلق رکھتی تھیں۔‘

یہ بھی پڑھیے

پروین بابی: فلمی شہرت، تین عاشق اور تنہائی میں موت

’انڈیا ایک پدرانہ سماج ہے‘

‘کیا جنسی مناظر بالی وڈ میں کامیابی کی ضمانت ہیں؟’

ویب سائٹ بالی ووڈ ہنگامہ کے فریدون شہریار کے ساتھ زوم پر ایک انٹرویو میں پروین بابی کے بارے میں ایک اور واقعے کا ذکر کرتے ہوئے کبیر بیدی نے کہا کہ پروین کے ذہنی مسائل بہت پہلے شروع ہو چکے تھے۔

’احمد آباد میں جب پروین بابی سینٹ زیویئر کالج میں پڑھتی تھیں تو ہندو مسلم فسادات کے دوران کالج کی میٹرن نے تمام مسلم لڑکیوں کو ایک ٹرک میں چھپا کر ان پر گدے رکھ دیے تھے تاکہ انھیں کوئی دیکھ نہ سکے۔ اس دوران غالباً پروین کو پہلا پینِک اٹیک آیا تھا۔‘

کبیر بیدی کا کہنا تھا کہ پروین بابی کو شفقت اور توجہ کی ضرورت تھی اور ان کے ساتھ رشتے کے دوران انھوں نے پروین کو محبت اور تحفظ دینے کی پوری کوشش کی لیکن اس رشتے میں اتنے اُتار چڑھاؤ آئے کہ یہ کامیاب نہیں ہو سکا اور پروین بابی جو ان کے ساتھ اٹلی منتقل ہو چکی تھیں، انھیں چھوڑ کر واپس ممبئی آگئیں۔

کبیر بیدی کا کہنا تھا ان کی واپسی پر میڈیا نے انھیں اس طرح ملزم قرار دینے کی کوشش کی جیسے انھوں نے پروین کو جذباتی طور پر توڑ کر رکھ دیا ہو اور وہ اپنے حواس کھو بیٹھیں ہوں۔

کبیر بیدی کے مطابق ان کے دل میں آج بھی پروین بابی کا ایک خاص مقام ہے اور ہمیشہ رہے گا کیونکہ ان کے تمام رشتوں میں یہ رشتہ ان کے لیے بہت اہم ہے۔

سلمان خان: فلم چھوڑ دی تاکہ شاہ رخ کو بھی کوئی اچھی فلم ملے

رشتہ تو سلمان خان اور شاہ رخ خان کا بھی کافی مضبوط ہے، تبھی تو سلمان نے شاہ رُخ کی فلم پٹھان میں سپیشل اپیئرنس کے لیے کوئی فیس نہیں لی۔

یہ اور بات ہے کہ ماضی میں ان کے درمیان بھی تلخیاں تھیں۔ لیکن اب ان کی دوستی کا یہ عالم ہے کہ ایک دوسرے کی فلموں میں چھوٹے چھوٹے کردار نبھانے کے لیے تیار رہتے ہیں۔

شاہ رخ خان کی فلم چک دے انڈیا کے لیے رول کے لیے پہلے سلمان خان سے رابطہ کیا گیا تھا لیکن سلمان نے فلم کرنے سے انکار کر دیا تھا لیکن جب فلم سلطان کی پروموشن کے دوران کسی نے ان سے پوچھا کہ انھوں نے ’چک دے انڈیا‘ کیوں ٹھکرائی تھی تو سلمان نے مذاق میں کہا تھا کہ انھوں نے یہ فلم اس لیے نہیں کی تھی تاکہ شاہ رخ کو بھی کوئی اچھی فلم مل جائے گی۔

لیکن حال ہی میں ایک انٹرویو میں سلمان نے کہا کہ جب انھیں چک دے کی پیشکش ہوئی اس وقت ان کی امیج بلکل مختلف تھی وہ پارٹنر جیسی کمرشل فلمیں کر رہے تھے اور یہ سنجیدہ فلم تھی جس میں ’مجھے وگ پہن کر انڈیا کو میڈل جتوانا تھا۔‘

ان کا کہنا تھا کہ یہ ان کے طرز کی فلم نہیں تھی۔ بعد میں اس فلم کو نہ صرف کئی ایوارڈز بلکہ ناقدین کی ستائش بھی ملی۔ شاید یہی وجہ تھی کہ سلمان خان نے کچھ سال بعد فلم سلطان کی جس میں وہ انڈیا کے لیے میڈل جیت کر لائے۔

‘کچن کے انچارج سیف اور تیمور ہیں‘

کرینہ کپور خان اپنے دوسرے بچے کی پیدائش کے بعد کام پر واپس پہنچ گئی ہیں۔

ڈسکوری پلس پر ‘سٹارز ورسز فوڈ’ نام کے اس شو میں کرینہ پیزا بناتی نظر آئیں گی۔ کرینہ نے انسٹاگرام پر اس شو کا ٹیزر پوسٹ کیا ہے۔

اس قسط میں کرینہ نے یہ بھی بتایا کہ حمل کے دوران انھیں ہمیشہ پیزا اور پاستا کھانے کا دل کرتا تھا۔

یہ پوچھے جانے پر کہ باورچی خانے کا انچارج کون ہے، کرینہ کا جواب تھا ’سیف اور تیمور۔‘

کرینہ کے مطابق سیف نے لاک ڈاؤن کے دوران کھانوں کی کئی نئی تراکیب سیکھی ہیں۔

چالیس سالہ ’بیبو‘ اس قسط میں اپنی کچھ دوستوں کے ساتھ گپ شپ لگاتی نظر آئیں۔

جب ان سے پوچھا گیا کہ ایسی کون سی تین چیزیں ہیں جو وہ رات کو بستر میں ساتھ لے کر جاتی ہیں تو ان کا جواب تھا ’وائن کی بوٹل، پاجاما اور سیف۔‘

Comments - User is solely responsible for his/her words

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

بی بی سی

بی بی سی اور 'ہم سب' کے درمیان باہمی اشتراک کے معاہدے کے تحت بی بی سی کے مضامین 'ہم سب' پر شائع کیے جاتے ہیں۔

british-broadcasting-corp has 20052 posts and counting.See all posts by british-broadcasting-corp