ہماری شام کیسے غارت ہوئی؟

جوانی کے کچھ ایام تک شخصیت میں اصلاح کی اُمید رہتی ہے لیکن پکی عمر کو پہنچنے تک شخصیت کی جو بھی چبل مارنے کی صلاحیت ہو وہ پکے سانچے میں ڈھل چکی ہوتی ہے۔ ہم تو پکی عمر سے آگے نکل چکے ہیں۔ جو ہیں وہی رہیں گے۔ اس لئے اب کوشش ہوتی ہے…

Read more

ایسا کرکٹ میچ لاہور کو کتنے میں پڑتا ہے؟

عقل نام کی چیز ہماری ریاست کے قریب کبھی پھٹکی ہے؟ ایسے ایک کرکٹ تماشے کا کیا فائدہ جس سے آدھا لاہور مشکلات میں پڑ جائے۔ سڑکیں بند، ٹریفک بلاک، عام آدمی خوار، پوری پولیس سکیورٹی پہ لگی ہوئی اور ساتھ فوج کی بھی معاونت۔ صرف اس لئے کہ ہم کہہ سکیں کہ دیکھیں حالات…

Read more

کچھ ہماری بھی سُن لی جائے

کشمیر کو آزاد کرانے کا فارمولا ہمارے پاس نہیں۔ قوم کو ترقی کی بلندیوں پہ لے جانے کا بھی نسخہ کوئی نہیں۔ بس اتنا پتہ ہے کہ ہماری رہی سہی زندگی میں حالات ایسے ہی چلتے رہیں گے۔ بیل گاڑی کی رفتار یہی رہے گی۔ اسی لیے زیادہ اونچی نصیحتوں کا کچھ فائدہ نہیں۔ پھر بھی ترلے کچھ ہمارے ہیں لیکن محدود نوعیت کے۔

Read more

اگر دیس کچھ تھوڑا سا بدل سکے

دفاع پہ ہم نے بہت دھیان دیا اور اب ہمارا دفاع مضبوط ہے۔ اچھی خاصی فوج ہے، لڑاکا جہاز ہیں، بحریہ کے پاس بھی بہت کچھ ہے۔ کروز میزائل بنانے کی صلاحیت ہم رکھتے ہیں۔ بڑے میزائل بھی ہم نے بنا لیے اور ایٹمی صلاحیت بھی ہے۔ اور کیا چاہیے؟ اتنا کچھ ہوتے ہوئے بھی…

Read more

ڈھنگ سے جینے کا طریقہ نہ آیا

کہنے کو تو آزادی ملی۔ بٹوارہ ہوا اور دو ملک معرضِ وجود میں آئے (ان میں سے ایک نے ایک اور کو بھی جنم دیا) لیکن جینے کا ڈھنگ نہ آیا۔ عداوت جو تھی تقسیم سے پہلے ختم ہو جانی چاہیے تھی۔ لیکن ایسی عداوت پڑی کہ ختم ہونے کا نام نہیں لیتی۔ اَب تو اتنے زورں پہ ہے کہ آپس میں عقل کی بات بھی محال ہے۔

Read more

پاکستانی آمریت کے فوائد

یہاں کی آمریتوں نے قومی ذہن کو یکسو کیا اِس نکتے پہ کہ ملت کے تمام مسائل کی جڑ آمریت ہے اور تمام بیماریوں کا حل جمہوریت میں ہے۔ فکری اور نظریاتی طور پہ انتشار کی بجائے قوم کا ذہن استحکام کی طرف گیا۔ جنرل ضیاء کے دور میں یا تو سرکار کا بھونڈی طرز…

Read more

کن چیزوں کو ہم آج رو رہے ہیں

بھارتی آئین میں کشمیر کی جس سپیشل حیثیت کو ہم کچھ سمجھتے ہی نہ تھے آج کے ہنگام میں ہم نے اُسے گلے لگا لیا ہے۔ جس حیثیت کو ہم مذاق سے بھی بد تر سمجھتے تھے آج اُس کا حوالہ دیتے ہوئے ہمارے وزیر اعظم بھی کہتے ہیں کہ ہندوستان سے کوئی مذاکرات نہیں ہو سکتے جب تک وہ حیثیت بحال نہ ہو۔

Read more

نہ خیالات تبدیل ہونے ہیں نہ ریاست

جن خطوط پہ ہماری ریاست استوار ہے انہوں نے تبدیل نہیں ہونا۔ ارتقائے نظریہ کی گنجائش پاکستان میں نہیں۔ پہلے ادوار میں نظریاتی تبدیلی کی پھر بھی تھوڑی سی گنجائش تھی، وہ اب ختم ہو چکی ہے ۔ نہ قد کاٹھ کے سیاست دان ہمارے معاشرے میں رہ گئے ہیں اور سیاسی پارٹیوں کا جو…

Read more

جمہوریت کس مرض کی دوا ہے؟

عام آدمی کی صحت پہ جمہوری بحثوں کا کیا اثر پڑتا ہے؟ جمہوری حکومت ہو یا غیر جمہوری، انتخابات ہوں یا نہ ہوں، ہمارے تھانوں کا ماحول وہی رہتا ہے۔ تفتیش کا طریقہ کار وہی ہوتا ہے جو تفتیشی افسر کے من میں آئے۔ اس ماحول کو ہم نے ایک خوبصورت نام دیا ہوا ہے،…

Read more

حکومت ڈوب رہی ہے

آئے روز اس تاثر کو تقویت پہنچ رہی ہے کہ یہ حکومت اپنے سے گہرے پانی میں کھڑی ہے۔ اِن سے کچھ ہو نہیں رہا اور معاملات کی سمجھ اِن میں نہیں ہے۔ گیس انفراسٹرکچر ٹیکس پہ جو تماشا حکومت نے بنایا ’یہ اس کی ایک مثال ہے۔ اتنی لعن طعن انہیں اِس پہ ہوئی کہ فیصلہ واپس لینا پڑا۔ فیصلہ واپس ہوا لیکن تماشا تو بن گیا۔ دوسرا اُس غریب کی کہانی جس کا نام صلاح الدین تھا۔ کہاں اُس کی قسمت ہاری کہ وہ پولیس کے ہتھے چڑھا اور جان گنوا بیٹھا۔ عمران خان کی زبان پہ یہ بات چڑھی ہوئی تھی کہ ہم پولیس کو درست کریں گے۔ درستی کا یہ عالم ہے۔

Read more