کشمیر کہانی …(9)

مائونٹ بیٹن نے جناح صاحب اور لیاقت علی خان کے ساتھ اپنا پورا پلان شیئر کیا کہ اب جبکہ سی آئی ڈی پنجاب کے پاس پکی انفارمیشن ہے کہ جناح صاحب کو کراچی میں چودہ اگست کو قتل کرنے کا پلان بن چکا ہے تو اس کو ناکام کیسے بنانا ہے۔ مائونٹ بیٹن کا خیال…

Read more

کشمیر کہانی۔ ۔ ۔ ( 9 )۔

ماؤنٹ بیٹن نے جناح صاحب اور لیاقت علی خان کے ساتھ اپنا پورا پلان شیئر کیا کہ اب جبکہ سی آئی ڈی پنجاب کے پاس پکی انفارمیشن ہے کہ جناح صاحب کو کراچی میں چودہ اگست کو قتل کرنے کا پلان بن چکا ہے تو اس کو ناکام کیسے بنانا ہے۔ ماؤنٹ بیٹن کا خیال تھا کہ بہتر ہوگا ’وہ فوری طور پر پنجاب کے گورنر سر ایوین جینکنز سے سفارشات مانگیں کہ ان کے خیال میں اس سازش کو ناکام کیسے بنایا جا سکتا ہے اور ساتھ ساتھ ان دو عہدیداروں سے بھی مشورہ مانگیں‘ جنہیں پہلے نامزد کر دیا گیا تھا کہ وہ پندرہ اگست کے بعد دونوں ملکوں کے معاملات کو دیکھیں گے۔

Read more

کشمیر کہانی …(7)

لارڈ مائونٹ بیٹن کو یہ توقع نہیں تھی کہ مہاراجہ ہری سنگھ کچھ اور منصوبے بنا کر بیٹھا ہے۔ اس لیے مہاراجہ کے منہ سے یہ سن کر ہی لارڈ مائونٹ بیٹن چڑ گیا‘ جب ہری سنگھ بولا کہ دراصل وہ ہندوستان اور پاکستان دونوں کے ساتھ الحاق نہیں چاہتا‘ وہ کشمیر کو آزاد ریاست…

Read more

کشمیر کہانی۔ ۔ ۔ ( 7 )۔

لارڈ ماؤنٹ بیٹن کو یہ توقع نہیں تھی کہ مہاراجہ ہری سنگھ کچھ اور منصوبے بنا کر بیٹھا ہے۔ اس لیے مہاراجہ کے منہ سے یہ سن کر ہی لارڈ ماؤنٹ بیٹن چڑ گیا ’جب ہری سنگھ بولا کہ دراصل وہ ہندوستان اور پاکستان دونوں کے ساتھ الحاق نہیں چاہتا‘ وہ کشمیر کو آزاد ریاست…

Read more

کشمیر کہانی۔ ۔ ۔ ( 6 ) ۔

گلاب سنگھ نے ایک کروڑ روپے میں انگریزوں کے ساتھ کشمیر کی ڈیل تو کر لی تھی لیکن اب اسے کشمیر میں بغاوت کا سامنا تھا۔ سکھوں کے نامزد کردہ گورنر نے اس کے لیے مسائل کھڑے کر دیے تھے۔ اس پر گلاب سنگھ کے پاس ایک ہی حل بچا تھا کہ وہ انگریزوں سے رابطہ کرے، جنہیں اس نے پچھتر لاکھ روپے کی نقد ادائیگی کرنی تھی، اور ان کی مدد سے پورے کشمیر کا قبضہ لے۔ انگریزوں کو اگر اپنے پچھتر لاکھ روپے نقد اور پچیس لاکھ روپے کی کشمیر کی پہاڑیاں چاہیے تھیں تو انہیں پورا اقتدار بھی لے کر دینا ہوگا۔

Read more

کشمیر کہانی۔ ۔ ۔ ( 5 )۔

وی پی مینن کو جتنی جلدی دلی لوٹ جانے کی تھی، راجہ جودھ پور اتنا ہی عیاشی کے موڈ میں تھا کہ ہندوستان سے الحاق کو بھرپور انداز میں منایا جائے، اس لیے وی پی مینن نہیں جاسکتا تھا۔ جو ہونا تھا، وہ ہو چکا۔ اب، نئی زندگی کا آغاز جشن سے کیا جائے۔ اتنی دیر میں راجہ نے ایک اور فرمائش کی کہ اب روسٹ گوشت پیش کیا جائے اور ساتھ ہی رقاصاؤں کو حکم ہوا کہ وہ رقص پیش کریں۔ پھر حکم ہوا کہ کوئی جادوگر وہاں جادو سے مہمانوں کو محظوظ کرے۔

Read more

کشمیر کہانی۔ ۔ ۔ ( 4 ) ۔

وائسرائے ہند لارڈ ماؤنٹ بیٹن اور پٹیل کو اندازہ تھا کچھ راجے بات نہیں مان رہے۔ اس کا مطلب تھا کہ وہ محمد علی جناح سے رابطے میں تھے تاکہ بہتر ڈیل لے کر اپنا مستقبل محفوظ کر سکیں۔ اس لیے وہ سب جناب جناح کے ملاقاتیوں پر نظر رکھے ہوئے تھے۔ ا گرچہ جودھ…

Read more

کشمیر کہانی۔ ۔ ۔ ( 3 )۔

وی پی مینن کی کہانی بہت مسحور کن ہے کہ کیسے ایک عام سا لڑکا وائسرائے ہند کا معتمد خاص بن گیا۔ یہ لڑکا جس عام سے خاندان میں پیدا ہوا، وہاں بارہ بہن بھائی تھے۔ جب وہ تیرہ برس کا ہوا تو اسے اپنا سکول چھوڑنا پڑا کیونکہ گھر کے حالات اجازت نہیں دیتے تھے۔ اب اسے تیرہ سال کی عمر میں ہی کمانے پر لگ جانا تھا۔ وہ سکول چھوڑ کر کنسٹرکشن مزدور لگ گیا۔ وہاں کام نہ بنا تو کوئلے کی کانوں میں مزدوری کرنے لگا۔ پھر ایک فیکٹری میں نوکری تلاش کر لی۔

Read more

کشمیر کہانی۔ ( 2 ) ۔

نہرو نے سوچا بھی نہ تھا کہ لارڈ ماؤنٹ بیٹن اس طرح کا منصوبہ بنا کر بیٹھا ہے جس کے مطابق وہ ہندوستان میں دو نہیں بلکہ درجن بھر آزاد ملک چھوڑ کر جانا چاہتا تھا۔

اس پلان کے تحت لارڈ ماؤنٹ بیٹن نے طے کیا ہوا کہ پاکستان کے علاوہ بنگال بھی آزاد ملک بنے گا۔ نہرو یہ سوچ کر ہی کانپ گیا کہ وہ بھارت جس کی آزادی کے لیے سب لڑتے رہے تھے اس کا اہم علاقہ ایک آزاد ملک بنے گا؟ بنگال، جو ہندوستان کا دل تھا، ہمیشہ کے لیے اس کے سینے میں ایک آزاد ملک بن کر پیوست رہے گا۔ بنگال کوکھونا وہ کیسے افورڈ کر سکتے تھے؟ کلکتہ ایک تاریخی ساحلی شہر اور اس کے کارخانے، ملیں، سٹیل ورکرز سب کچھ ہندوستان کے ہاتھ سے نکل جائے گا۔

Read more

کشمیر کہانی۔ ۔ ۔ ( 1 )۔

ہندوستان کی تقسیم کا اعلان ہو چکا تھا۔ ہندوستان کے آخری وائسرائے لارڈ ماؤنٹ بیٹن کو کشمیر کے مہاراجہ ہری سنگھ کے ساتھ بیٹھے ہوئے، دہلی سے سری نگر آنے سے پہلے سردار پٹیل کے ساتھ ہونے والی وہ خفیہ گفتگو یاد آئی جس کی وجہ سے وہ اب کشمیر آئے تھے۔ ماؤنٹ بیٹن کو…

Read more