مرحوم سعودی شہزادہ سعود الفیصل نے فحش فلمیں بنوائیں لیکن پیسے ادا نہیں کیے: فرانسیسی کمپنی

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

دی لوکل کی رپورٹ کے مطابق فحش فلمیں بنانے والی فرانسیسی کمپنی SARL Atyla نے دعویٰ کیا ہے کہ ”مرحوم سعودی شہزادے سعود الفیصل نے ان سے فحش فلمیں بنوائیں لیکن انہیں پیسے ادا نہیں کیے جس پر وہ ان کے خلاف مقدمہ کروا چکی ہے۔“

کمپنی کا کہنا ہے کہ ”ہم نے ثبوت کے طور پر عدالت کو تاحال وہ نجی فلمیں نہیں دیں لیکن اگر عدالت ہمارے دیگر ثبوتوں پر مطمئن نہ ہوئی اور مزید ثبوتوں کا حکم دیا تو یہ فلمیں بھی پیش کر دیں گے۔“واضح رہے کہ فرانس میں شہزادہ محمد بن سلمان کی بہن پر بھی ایک مقدمہ درج ہے اور ان کی گرفتاری کے وارنٹ جاری ہو چکے ہیں۔ ان کی بہن پر الزام ہے کہ اس نے 2016ء میں پیرس میں اپنے قیام کے دوران اپنے باڈی گارڈ کو حکم دے کر ایک شخص پر تشدد کروایا تھا۔

image_pdfimage_print
Comments - User is solely responsible for his/her words

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •