مولانا فضل الرحمن کے خواتین بیوٹیشنز سے میک اپ کروانے کا انکشاف

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

کچھ عرصہ قبل پاکستان تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان کی ایک تصویر وائرل ہوئی تھی جس میں ایک خاتون ان کا میک اپ کر رہی تھی۔ تصویر وائرل ہونے کے بعد انکشاف ہوا تھا کہ عمران خان پبلک پلیس پر جانے سے قبل میک اپ کرواتے ہیں تاکہ چہرے پر موجود جھریوں کو چھپایا جا سکے۔ پاکستان کے مخلتف سیاستدان ویسے تو میک اپ کرواتے ہی ہیں خاص طور پر ٹی وی پر آنے سے قبل تو میک اپ ضروری ہوتا ہے۔ تاہم اس دوڑ میں جمعیت علمائے اسلام ف کے سربراہ مولانا فضل الرحمن بھی پیچھے نہپں ہیں۔

ایک خاتون بیوٹیشن نے اس بات کا انکشاف کیا ہے کہ وہ مولانا فضل الرحمن کا میک اپ کرتی ہیں۔ دو بیوٹیشن خواتین  جاوید چوہدری کے پروگرام میں شریک تھیں جہاں انہوں نے اس بات کا انکشاف کیا کہ وہ مختلف سیاستدانوں کا میک اپ کر چکی ہیں۔

جس پر اینکر پرسن جاوید چوہدری نے سوال کیا کہ کیا آپ نے کبھی مولانا فضل الرحمن کا میک اپ کیا؟ جس پر بیوٹیشن نے جواب دیا کہ جی بلکل مولانا کا میک اپ بھی کیا۔ صحافی نے سوال کیا کہ مولانا تو صرف پف بنواتے ہوں گے جس پر بیوٹیشن نے جواب دیا کہ مولانا فضل الرحمن کی داڑھی ہوتی ہے اس لیے ان کا زیادہ میک اپ نہیں ہو پاتا۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ ہمیں اس بات کا ڈر تھا کہ مولانا فضل الرحمن تو میک اپ نہیں کرواتے ہوں گے۔ ہم نے ڈرتے ڈرتے مولانا فضل الرحمن کا میک اپ کیا۔ اس کے علاوہ لال مسجد والے عبدالرشید غازی کا بھی میک اپ کیا۔

بیوٹیشن کا مزید کہنا تھا کہ مولانا فضل الرحمن زیادہ میک اپ نہیں کرواتے مگر کرواتے ضرور ہیں۔ اس کے علاوہ جماعت اسلام کے امیر سراج الحق بھی لڑکیوں سے میک اپ کرواتے ہیں۔

Comments - User is solely responsible for his/her words

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •