اپوزیشن کی رہبر کمیٹی

کہتے ہیں شہرِ اقتدار میں افواہیں نہیں ہوتیں بلکہ ’پری میچور فیکٹس‘ ہوتے ہیں جن پر کان دھر کر آپ سیاسی اُفق پر رونما ہونے والی تبدیلیوں کا وقت سے پہلے اندازہ لگا سکتے ہیں۔

چند ایک افواہوں پر یقین کرتے ہوئے بیشتر افراد کی طرح میں بھی یہی سوچتا تھا کہ اپوزیشن جماعتوں نے جس دن اپنے آپسی شکوک وشبہات اور وقتی مفادات کو بالائے طاق رکھ کر حکومتِ وقت کے خلاف طبل جنگ بجا دیا اور حکومتی صفوں میں سے چند دیوار پر بیٹھے پرندوں یا ٹھوس سیاسی اصطلاح میں فصلی بٹیروں کو ساتھ ملا لیا تو چند ووٹوں پر کھڑی اس حکومت کو شاید بچانے والے بھی نا بچا پائیں۔

Read more