شوہر اور دیور کی جنسی زیادتی کا شکار بننے والی بدنصٰیب لڑکی کو پھانسی دے دی گئی

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

اس لڑکی کو پھانسی دے دی گئی جسے سالوں تک اس کا شوہر اپنے بھائی کے ساتھ جنسی زیادتی کا نشانہ بناتا رہا کیونکہ۔۔۔

 

ایران میں اس لڑکی کو پھانسی دے دی گئی ہے جسے سالوں تک اس کا شوہر اور دیور جنسی زیادتی کا نشانہ بناتے رہے۔ نیوز ویک کے مطابق 24سالہ زینب سیکانوند نے سالہا سال کی اس اذیت سے نجات پانے کے لیے چھریوں کے وار کرکے اپنے شوہر کو قتل کر دیا تھا، جس پر اب اسے موت کی سزا دے دی گئی ہے۔ زینب کی شادی اس وقت ہوئی جب اس کی عمر محض 15سال تھی۔ تین سال بعد 18سال کی عمر میں اس نے شوہر کے مظالم سے تنگ آ کر یہ انتہائی اقدام اٹھایا۔

زینب نے عدالت میں بتایا تھا کہ ”میرا شوہر اور اس کا بھائی دونوں مجھے جنسی و جسمانی تشدد کا نشانہ بناتے تھے۔“ قتل کے بعد زینب کے دیور نے اسے کہا کہ اگر وہ قتل کی ذمہ داری قبول کرلے تو وہ اسے معاف کر دے گا۔ زینب اس شخص کی چال میں آ گئی اور ذمہ داری قبول کر لی لیکن پھر اس نے معاف کرنے سے انکار کر دیا۔ عدالت نے بھی زینب کے بیان بدلنے پر نئی انکوائری کا حکم نہیں دیا اور اسے سزائے موت سنا دی۔ اسے آج صبح مغربی آذربائیجان صوبے کی ارمیہ سنٹرل جیل میں پھانسی دی گئی۔

Comments - User is solely responsible for his/her words

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •