آپ آصف علی زرداری کے بارے میں یہ نہیں جانتے

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

ایک اچھے دوست کا کہنا ہے کہ وہ آصف علی زرداری کو میڈیا کے ذریعے ہی جانتے ہیں اور چونکہ میڈیا میں ان کی کردار کشی کی گئی ہے لہذا وہ اسے سچ سمجھنے پر مجبور ہیں۔ وہ ذاتی طور پر اصف علی زرداری کو نہیں جانتے اس لئے وہ آصف علی زرداری کو اچھا سمجھنے سے معذور ہیں۔ آصف علی زرداری کے بارے میں آپ ذاتی طورپر کچھ نہیں جانتے۔

آپ نے بالکل درست کہا آپ آصف علی زرداری کے بارے میں یہ نہیں جانتے کہ اسمبلی میں انتہائی معمولی اکثریت کے ساتھ پاکستان کی تاریخ میں پہلی بار فوجی صدر کو مواخذے کی کارروائی کی دھمکی کے ذریعے برطرف کرنے میں کامیابی حاصل کی۔ آپ بالکل نہیں جانتے کہ آصف علی زرداری کے پانچ سال پاکستان کی تاریخ میں واحد دور حکومت ہیں جس طور میں آئین جمہوریت اور جمہوری اقدار کی بالادستی قائم رہیں اور باوجود بے پناہ دباؤ مجبوریوں اور اداروں کی سازشوں کے انہوں نے ایک بھی قدم جمہوری اقدار اور آئین کی مخالفت میں نہیں اٹھایا۔

آصف علی زرداری پاکستانی تاریخ میں پہلے صدر ہیں جنہوں نے اپنے لامحدود اور بے پناہ اختیارات اداروں میں تقسیم کیے۔ سبحان اللہ زبردست آپ یہ نہیں جانتے کہ انہوں نے بہادری سے قید کاٹی۔ آپ یہ نہیں جانتے کہ بطور صدر ان کا رویہ جمہوریت پرستوں والا تھا یا جمہوریت مخالف والا تھا۔ آپ یہ نہیں جانتے کہ بدترین دباؤ میں انہوں نے کیسا پرفارم کیا۔ آپ یہ نہیں جانتے کہ کم ترین اکثریت کے ساتھ انھوں نے طاقتور ترین قانون سازی کس طرح کی۔

آپ یہ بھی نہیں جانتے کہ نواز شریف کے روز سپریم کورٹ میں پیش ہونے کے باوجود آصف علی زرداری کے پورے پانچ سال میں اپوزیشن کے ارکان اسمبلی کا پروٹوکول، ان کے حقوق، ان کی مراعات اور ان کے فنڈز یکساں برابر تقسیم ہوتے رہے۔ بلکہ بعض اوقات اپوزیشن کو زیادہ ویلیو ملتی رہی۔ آپ یہ بھی نہیں جانتے کہ آصف علی زرداری کے دور میں کوئی سیاسی قیدی ملک میں نہیں تھا۔

آپ یہ بھی نہیں جانتے کہ آصف علی زرداری کے دور میں میں پاکستان ایک پُرامن جزیرے کی مانند اپنے ہمسایوں کے ساتھ تعلقات رکھے ہوئے تھا۔ آپ یہ بھی نہیں جانتے کہ آصف علی زرداری کے دور میں تاریخ کا واحد کامیاب فوجی آپریشن سوات میں ہوا۔ اور سوات کے پچیس لاکھ شہریوں کو تین مہینے کے اندر واپس آباد کیا گیا۔ سبحان اللہ ان باتوں کی طرف آپ کا بھی دھیان نہیں کریں گے۔

Comments - User is solely responsible for his/her words

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
قانون فہم کی دیگر تحریریں
قانون فہم کی دیگر تحریریں