دیکھ بھال پر مامور شخص ڈولفن مچھلی کے ساتھ ایک برس تک جنسی زیادتی کرتا رہا

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

امریکہ میں ایک شخص نے اپنی دوست ڈولفن مچھلی کے ساتھ ایک سال تک جنسی زیادتی کرنے کا اعتراف کر لیا۔ ڈیلی سٹار کے مطابق اس 68 سالہ شخص کا نام میلکولم برینر ہے، جو ایک تھیم پارک میں ملازم تھا اور وہاں ڈولفن مچھلیوں کی دیکھ بھال اس کے ذمے تھی۔ وہیں اس کی ایک ڈولفن مچھلی کے ساتھ دوستی تھی۔ ڈولفن مچھلیاں ذہین ترین جانوروں میں شمار کی جاتی ہیں اور انسانوں کے ساتھ بہت ملنسار ہوتی ہیں۔

میلکولم نے اپنے اعترافی بیان میں بتایا ہے کہ اس وقت وہ عمر کی 20 کی دہائی میں تھا جب اس کی ’ڈولی‘ نامی ڈولفن کے ساتھ دوستی تھی اور وہ ایک سال تک ڈولی کے ساتھ جنسی تعلق قائم کرتا رہا۔

میلکولم نے دعویٰ کیا ہے کہ اس نے ڈولی کے ساتھ جنسی تعلق میں پہل نہیں کی تھی بلکہ ڈولی نے خود اسے اپنی طرف راغب کیا تھا۔ مجھے ڈولفنز تک مکمل رسائی حاصل تھی اور میں ان کے ساتھ پیراکی کیا کرتا تھا۔ اسی دوران میری ڈولی کے ساتھ دوستی ہوئی۔ اسی دوران ایک روز ڈولی نے میرے سامنے آ کر ایسی پوزیشن بنا لی جس سے مجھے احساس ہو گیا کہ وہ کیا چاہتی ہے۔ یہ دیکھ کر ایک نر ڈولفن وہاں آ گئی اور ڈولی کے ساتھ جنسی تعلق قائم کرنے سے پہلے مجھے اس نر ڈولفن سے لڑائی کرنی پڑی۔

(بشکریہ: روز نامہ پاکستان)

Comments - User is solely responsible for his/her words

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

Leave a Reply