کورونا کو خدا کی طرف سے ہم جنس پرستی کی سزا قرار دینے والا اسرائیلی وزیر صحت بیوی سمیت کورونا کا شکار

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

اسرائیل کے وزیرِ صحت یاکوو لٹزمین بھی کورونا وائرس کا شکار ہو گئے ہیں۔ خبر ایجنسی کے مطابق اسرائیلی وزیرِ صحت یاکوو لٹزمین اور ان کی اہلیہ اب آئسولیشن میں چلے گئے ہیں، اس اعلان کے بعد اسرائیل کے وزیر اعظم نتن یاہو قرنطینہ میں چلے گئے ہیں کیوں کہ وہ وزیرِ صحت کے رابطے میں آئے تھے۔

اسرائیل کی خفیہ ایجنسی اور نیشنل سیکورٹی کونسل کے سربراہوں کو بھی قرنطینہ میں جانے کا کہہ دیا گیا ہے وہ لوگ بھی وزیرِ صحت کے رابطے میں تھے۔

https://nayadaur.tv/2020/04/israel-health-minister-who-termed-coronavirus-divine-punishment-gets-coronavirus/

واضح رہے کہ اسرائیل کے وزیرِ صحت یاکوو لٹزمین نے چند روز قبل کورونا وائرس کو ہم جنس پسندوں کے لئے خدائی عذاب قرار دیا تھا۔ اسرائیل کی وزارت صحت نے پر قسم کی اجتماعی عبادات پر عارضی پابندی عائد کر رکھی ہے لیکن انتہا پسند مذہبی خیالات کے حامل یاکوو لٹزمین اپنی ہی وزارت کے احکامات کی خلاف ورزی کرتے ہوئے نہ صرف سناگاگ میں عبادت کرتے رہے بلکہ اپنے فرقے کے ارکان کے گھروں میں منعقد ہونے والی دعائیہ تقریبات میں بھی شرکت کرتے رہے۔

اسرائیل میں اب تک کورونا وائرس سے 49 افراد ہلاک ہوئے ہیں جبکہ 8400  کیس رپورٹ ہوئے ہیں ۔

https://www.pinknews.co.uk/2020/04/07/israel-health-minister-coronavirus-punishment-homosexuality-positive-covid-19-yaakov-litzman/

Comments - User is solely responsible for his/her words

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *