ٹک ٹاک ویڈیو بنانے پر اسپین میں خاتون پولیس آفیسر کو نوکری سے نکال دیا گیا

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

سپین میں ایک خاتون پولیس آفیسر کو اس کی ٹک ٹاک ویڈیوز کی وجہ سے نوکری سے نکال دیا گیا۔ ڈیلی سٹار کے مطابق سپین کے شہر ایسپاریگوئرا کی رہائشی یہ 40 سالہ آفیسر یولینڈا مول ہے، جس نے اپنی یونیفارم اور پستول کے ساتھ ایک ٹک ٹاک ویڈیو بنا ڈالی تھی جب وہ ایک ڈکیتی کی واردات کے بعد جائے وقوعہ پر جا رہی تھی۔ اس سے قبل بھی اس نے یونیفارم اور اسلحے کے ساتھ کئی ویڈیوز بنا کر اپنے ٹک ٹاک اکاﺅنٹ پر پوسٹ کر رکھی تھیں۔

رپورٹ کے مطابق یولینڈا کی یہ ویڈیوز اس کے اعلیٰ حکام کی نظر میں آ گئی اور انہوں نے اسے نوکری سے ہی نکال دیا۔ یولینڈا کا کہنا تھا کہ ”اس روز ہمیں ایک مسلح ڈکیتی کی کال موصول ہوئی اور ہم وہاں جا رہے تھے کہ راستے میں میں نے یہ ویڈیو بنائی۔ میں نے وہاں پہنچ کر اپنی ڈیوٹی اچھے طریقے سے سرانجام دی اور اس میں کوئی کوتاہی نہیں کی۔ اس کے باوجود مجھے نوکری سے نکال دیا گیا۔“

واضح رہے کہ یولینڈا ماضی میں برہنہ ماڈلنگ بھی کرتی رہی ہے۔ وہ سپین کے ڈیٹنگ شو ’ایڈم اینڈ ایو‘ میں بھی شرکت کر چکی ہے جس میں شامل ہونے والے امیدواروں کے لیے مکمل برہنہ ہونا لازمی شرط ہے۔

Comments - User is solely responsible for his/her words

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •