EnglishUrduHindiFrenchGermanArabicPersianChinese (Simplified)Chinese (Traditional)TurkishRussianSpanishPunjabiBengaliSinhalaAzerbaijaniDutchGreekIndonesianItalianJapaneseKoreanNepaliTajikTamilUzbek

کوئی ہے جو مغرب کو ’ان‘ سے زیادہ سمجھتا ہو؟ (سیاسی افسانچہ)۔

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

”میں چاہتا تو برطانیہ میں شہزادوں کی سی زندگی بسر کر سکتا تھا“ خان صاحب نے اپنی گفتگو کا آغاز کیا۔
”بالکل، بالکل“ کابینہ کے اراکین کورس کی شکل میں بولے۔
”لیکن میں نے پاکستان آ کر عوام کی خدمت کا فیصلہ کیا“ انہوں نے گفتگوجاری رکھی۔
”سبحان اللہ، سبحان اللہ۔“
”مغرب کو مجھ سے بہتر کوئی نہیں سمجھتا۔“
”بے شک، بے شک“ اراکین نے راگ الاپا۔
تم کیوں چپ ہو؟ ”خان صاحب نے غصے سے ایک سینیئر رکن کو مخاطب کیا۔
”خان صاحب، اچھا ہوتا اگر پاکستان کو بھی آپ سے بہتر کوئی نہ سمجھتا!“

Comments - User is solely responsible for his/her words

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

مخفیؔ

مخفیؔ سوچنے والا ذہن رکھتے ہیں اور دھڑکنے والا دل بھی، نہیں رکھتے تو بوجوہ اپنی شناخت آشکار کرنے کی ہمت نہیں رکھتے سو قلمی نام پر ہی اکتفا کیجئے۔ ویسے بھی شیکسپیئر فرما گئے ہیں، نام میں کیا رکھا ہے!

makhfi has 11 posts and counting.See all posts by makhfi

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے